آئی لیگ فٹ بال چمپئین شپ : رئیل کشمیر ایف سی اورچرچل برادرس گوا کا مقابلہ برابر دونوں ٹیمیں 90منٹ کے کھیل میں گول کرنے میںناکام ۔سینکڑوں شایقین محظوظ

سرینگر/ آئی لیگ فٹ بال چمپئین شپ برائے 2018-19 کے سلسلے میں ایک غیر معمولی میچ ٹی آر سی سنتٹھک ٹرف گرائونڈ پرکھیلا گیا اس میچ میں رئیل کشمیر فٹ بال کلب کا مقابلہ چرچل برادرس گوا سے ہوا جو بغیر کسی گول کے برابری پر ختم ہوا ،میچ کاآغازدن کے دوبجے ہوا سینکڑوں کی تعداد میں گرائونڈ پر موجود شایقین نے تالیاں بجاکر دونوں ٹیموں کا استقبال کیا ۔پہلے ہاف میں دونوں ٹیموں کے کھلاڑیوں نے ایک دوسرے پر سبقت لینے کی کوشش کی لیکن کوئی کامیابی نہیں ہوئی۔دوسرے ہاف میںبھی صورت حال اسی طرح برقرار رہی تاہم دونوں ٹیموں کے کھلاڑیوں نے شاندار کھیل کا مظاہرہ کیا ۔رئیل کشمیر کے کھلاڑیوں نے ۲۔۵۔۳۔کا فارمولہ اپنایا اورکئی موقعوں پر مخالف ٹیم کیلئے مشکلات پیدا کیں۔ اس دوران رئیل کشمیر کے کھلاڑیوں کو گول کرنے کے کئی مواقع میسر ہوئے جنہیں وہ گول میںتبدیل کرنے میں ناکام رہے تاہم چرچل برادرس کے گول کیپر نے شاندار دفاع کامظاہرہ کیا ۔میچ شروع ہونے سے قبل رئیل کشمیر ایف سی کے کپتان لوڈے نے کہا کہ اگرچہ انہیں سرد موسم کا سامنا ہے تاہم اس کے باوجود ان کے کھلاڑی سرد موسم میںکھیلنے کا تجربہ رکھتے ہیں۔انہوں نے کہا کہ شیلانگ آسام میں کھیلے گئے میچ میںبھی انہیں ایسی ہی صورت حال کا سامنا تھا جبکہ چرچل برادرس کے کپتان رومانیسن اور کوچ پیٹر جیچو نے کہا کہ خراب موسم ٹیم کے کھلاڑیوں کے کھیل پراثر انداز ہوسکتی ہے پہلی بار دونوں ٹیموں نے کشمیر کی سرزمین پر ایک دوسرے کامقابلہ کیا ۔ریاست کے سابق وزیر اعلیٰ عمر عبداللہ نے ایک ٹویٹ میںمیچ کے کشمیر میں انعقاد کو غیر معمولی قرار دیا۔سری نگر کے ٹي آرسي میدان پر آج تاریخ رقم ہو گئی اور جموں و کشمیر میں پہلی بار آئی لیگ کا کوئی میچ کھیلا گیا۔10 کھلاڑی رہ جانے کے باوجود گوا کے چرچل برادرز نے ریئل کشمیر ایف سی کو 12 ویں ہیرو آئی لیگ فٹ بال چمپئن شپ میں منگل کو گول بغیر ڈرا پر روک دیا۔دو بار کے سابق چمپئن چرچل کے گول کیپر جیمز کتھن کو پہلے ہاف سے ٹھیک پہلے باہر بھیج دیا گیا۔ چرچل کی ٹیم اس کے بعد 10 کھلاڑیوں کے ساتھ کھیلنے پر مجبور ہو گئی لیکن اس نے ریئل کشمیر کو اس موقع کا فائدہ نہیں اٹھانے دیا۔اسکاٹ لینڈ کے کوچ ڈیوڈ ربرٹسن کو اس بات کا ضرور افسوس ہوا ہوگا کہ ان کی ٹیم ریئل کشمیر اس مقابلے کو جیتنے کا سنہری موقع گنوا بیٹھی۔ ریئل کشمیر نے اس سے پہلے اپنے بیرونی میچ میں گزشتہ چمپئن منروا پنجاب کو شکست دی تھی۔چرچل کی تین ڈرا کے بعد تین پوائنٹس ہو گئے ہیں جبکہ ریئل کشمیر کے دو میچوں کے بعد چار پوائنٹس ہو گئے ہیں۔ ریئل کشمیر اب 11 نومبر کو نیروکا ایف سی کی میزبانی کرے گی۔

مزید دیکهے

متعلقہ خبریں