جموں کے حساس علاقوں میں فورسز چوکس کرفیو کے نفاذ کے بعد کشتواڑ میں حملہ آوروں کی تلاش:پولیس سربراہ

سرینگر /یو پی آئی /کشتواڑ میں آر ایس ایس لیڈر اور اُس کے محافظ کی ہلاکت کے بعد کسی بھی ناخوشگوار واقعے کو ٹالنے کیلئے ضلع بھر میں سخت کرفیو نافذ کردیا گیا ہے۔ پولیس چیف کے مطابق احتیاطی طورپر کرفیو نافذ کیا گیا ہے تاہم حالات پوری طرح سے قابو میں ہے۔ انہوںنے کہاکہ ضلع کے حساس علاقوں میں اضافی سیکورٹی فورسز کے اہلکاروں کو تعینات کیا گیا ہے۔ کشتواڑ میں آرایس ایس لیڈر اور اُس کے محافظ کی ہلاکت کے بعد ضلع بھر میں حالات کشیدہ اور پُر تنائو ہے۔ پولیس چیف دلباغ سنگھ نے کہاکہ کشتواڑ میں احتیاطی طورپر کرفیو نافذ کیا گیا ہے تاہم حالات پوری طرح سے قابو میں ہے۔ انہوںنے کہاکہ کسی بھی ناخوشگوار واقعے کوٹالنے کیلئے ضلع بھر میں سیکورٹی کے غیر معمولی انتظامات کئے گئے ہیں۔ ڈائریکٹر جنرل آف پولیس کے مطابق بعد دوپہر کشتواڑ کے ضلع اسپتال میں بندوق برداروں نے آر ایس ایس لیڈر اور اُس کے ذاتی محافظ پر فائرنگ کی جس کے نتیجے میں پولیس اہلکار کی موقع پر ہی موت واقع ہوئی جبکہ چندر کانت شرما کو نازک حالت میں جموں منتقل کیا گیا تاہم وہ وہاں زخموں کی تاب نہ لا کر دم توڑ بیٹھا۔ انہوںنے کہاکہ معاملے کی باریک بینی سے تحقیقات شروع کی گئی ہے اور جوکوئی بھی حملے میں ملوث ہوگا اُس کے خلاف سخت سے سخت کارروائی عمل میں لائی جائے گی۔ انہوںنے کہا کہ جموں کے حساس علاقوں میں سیکورٹی فورسز کو مستعد رہنے کے احکامات صادر کئے گئے ہیں۔ پولیس چیف کا کہنا ہے کہ پُر امن الیکشن کے انعقاد کو یقینی بنانے کی خاطر تمام تر اقدامات کئے گئے ہیں۔

مزید دیکهے

متعلقہ خبریں