جولائی کے وسط میں پارلیمنٹ کا مانسون اجلاس منعقد ہونے کا امکان


متنازعہ زرعی قوانین کو منسوخ کرنے پر تبادلہ خیال اور دیگر مسائل پر بات ہوگی
 مرکزی حکومت جولائی 2021 کے وسط کے آس پاس پارلیمنٹ کا مانسون اجلاس منعقد کرنے پر غور کر رہی ہے یہاں تک کہ پارلیمانی کمیٹیاں 16 جون 2021 سے کام کرنا شروع کردیں گی۔یہ پیشرفت مارچ میں بجٹ اجلاس میں کٹوتی کے بعد سامنے آئی ہے جب قانون ساز کئی ریاستوں میں اپریل سے مئی میں ہونے والے اسمبلی انتخابات کے لئے انتخابی مہم پر زور دینا چاہتے تھے۔ کرنٹ نیوز آف انڈیا کے مطابق گذشتہ سال کے آخر میں کووڈ۔19 کے بحران کے اثرات کی وجہ سے موسم سرما اور بجٹ سیشنوں کو موخر کردیا گیا تھا۔پارلیمنٹری کمیٹیوں میں سے ایک جو پہلے اجلاس کرے گی وہ پبلک اکاو¿نٹس کمیٹی ہوگی ، جس کی زیر صدارت لوک سبھا میں کانگریس کے قائد ادھیر چودھری کررہے ہیں۔اگرچہ آئندہ اجلاس کے بارے میں ابھی تفصیل کے ساتھ جانکاری منظرعام پر نہیں آئی ہے ، لیکن حکومت کے پاس پیش کرنے کے لئے متعدد اہم بل موجود ہیں جبکہ حزب اختلاف متنازعہ زرعی قوانین کو منسوخ کرنے پر تبادلہ خیال کرنے کا مطالبہ کررہی ہے جس نے مہینوں سے جاری احتجاج کو جنم دیا ہے۔اس کے علاوہ ایندھن کی قیمتیں میں لگاتار اضافہ اور حزب اختلاف کے خلاف حکمران حکومت کے ذریعہ تفتیشی ایجنسیوں کا مبینہ غلط استعمال پر بھی تحقیق اور بات چیت کے لیے حزب اختلاف زور دے گا۔ توقع ہے کہ بحث و مباحثے میں سے ایک اہم مسئلہ ہندوستان کا کورونا وائرس (Covid-19) کے خلاف لڑنا ہے

مزید دیکهے

متعلقہ خبریں