لیفٹنٹ گورنر نے کیاکھنموہ سری نگر میں500بستروں والے ائرکنڈیشنڈ کووڈاسپتال کاافتتاح


 طبی سہولیات کاشعبہ فعال، ہماری اجتماعی کوششوں کا نتیجہ خوش آئند
375بسترچوبیسوں گھنٹے آکسیجن سپلائی سے منسلک،125آئی سی یو بستر،25 بچوں کیلئے مخصوص:منوج سنہا
 جموں وکشمیرکے لیفٹنٹ گورنر منوج سنہا نے بدھ کے روز سری نگرکے مضافاتی علاقہ میں ڈی آرڈی اﺅ یعنی دفاعی تحقیق وترقیاتی ادارے کی جانب سے تعمیر وتیار کئے گئے آئی سی یویعنی انتہائی طبی نگہداشت والے شعبہ سے لیس500 بستروں والے کووڈ19اسپتال کاافتتاح کیا۔جموں میں گزشتہ ہفتے 500بستروں والے کووڈ اسپتال کوچالو کئے جانے کے بعدکھنموہ سری نگرمیں بھی 500بستروالے کووڈاسپتال کابدھ کوافتتاح کیا گیاجبکہ یہ اسپتال محض17دنوں میں پایہ تکمیل کوپہنچایاگیا۔جے ذرائع  کے مطابق لیفٹنٹ گورنر منوج سنہا نے کھنموہ سری نگرمیں ڈی آرڈی اﺅکی جانب سے تعمیرکئے گئے500بستروں والے کووڈاسپتال کاافتتاح کیا ،جس میں آئی سی یویعنی انتہائی طبی نگہداشت والا شعبہ بھی ہے ۔اس اسپتال کے کام کو دفاعی تحقیق وترقیاتی ادارے کی جانب سے محض17دنوں میں مکمل کیاگیا جبکہ ڈی آرڈی اﺅ نے جموں میں بھی کووڈمریضوں کیلئے مخصوص اسی نوعیت کے 500بستروں والے اسپتال کے کام کوگزشتہ ہفتے 16دنوں میں مکمل کیا،اورلیفٹنٹ گورنر نے اُس کاافتتاح کیا ،اورجموں میں قائم اسپتال کواگلے روز ہی چالو کیاگیا جبکہ کھنموہ سری نگرمیں قائم کئے گئے کووڈاسپتال کوجمعرات کے روز باضابطہ طور پرچالو یاعوام کیلئے وقف کیا جائے گا۔لیفٹنٹ گورنر منوج سنہا نے اس موقعہ پروزیر اعظم نریندر مودی ، مرکزی وزیرداخلہ امت شاہ ، اور وزیر دفاع راج ناتھ سنگھ کا جموں و کشمیر میں صحت کی دیکھ بھال اور طبی سہولیات کو بڑھانے میں ضروری مدد اور مداخلت کرنے پر دل سے شکریہ اداکیا۔انہوں نے کہاکہ کھنموہ سری نگرمیں قائم کووڈ اسپتال پوری طرح سے ائرکنڈیشنڈہے ۔لیفٹنٹ گورنر منوج سنہا نے مزیدکہاکہ اس اسپتال میں 125آئی سی یو یعنی انتہائی طبی نگہداشت والے بسترہونگے ،جن میں سے 25چھوٹے بچوں کیلئے مخصوص ہونگے ۔375بستروں کوچوبیسوں گھنٹے آکسیجن سپلائی سے منسلک رکھاگیا ہے جبکہ 10 بستروں والے ٹریج ایریا کو بھی 100 مربع میٹر میں تعمیر کیا گیا ہے ، جس میں تمام مطلوبہ جدید سہولیات موجود ہیں۔ لیفٹنٹ گورنر منوج سنہا نے مزیدکہاکہ ہم نے بہت ساری مداخلتوں کو عملی جامہ پہنانے کےلئے حکمت عملی تیار کی۔ آئی سی یو اور آکسیجن سے معاونت والے بستروں میں اضافہ کیاگیا ، سابقہ میڈیکل اور نئے کوالیفائیڈ عملے کی تعیناتی عمل میں لائی گئی ، پنچایت کوویڈ کیئر سنٹرز کے ذریعہ صحت کے نظام کی دوردورتک پہنچایاگیا جبکہ ساتھ ہی حکومت نے ساتھ ساتھ ٹیکہ کاری مہم کادائرہ بھی بڑھایا۔انہوں نے کہاکہ ہماری اجتماعی کوششوں کا نتیجہ خوش آئندہے۔لیفٹنٹ گورنر منوج سنہا نے کہاکہ جموں و کشمیر میں اب تمام کوویڈ 19 اور دوسرے مریضوں کے علاج کی زیادہ صلاحیت ہے ، اوریہ سب مختلف مداخلتوں کے متحرک اثرات اور وبائی بیماری کے جواب میں اسپتالوں کی گنجائش بڑھانے کےلئے بروقت فیصلے کرنے کی وجہ سے ممکن ہوا ہے۔کھنموہ سری نگرمیں 500 بستروں والے کووڈ19اسپتال کاافتتاح کرنے کے موقعہ پرممبرپارلیمنٹ ڈاکٹرفاروق ،ایل جی کے مشیر راجیورائے بھٹناگر،چیف سیکرٹری داکٹر ارون کمار مہتا،فائنانشل کمشنر اتل ڈلو،ایل جی کے پرنسپل سیکرٹری نریشورکمار،صوبائی کمشنرکشمیرپی کے پولے،پرنسپل جی ایم سی اینڈ اے ایچزڈاکٹر سائمہ رشید،ضلع ترقیاتی کمشنرسری نگرمحمداعجاز اورڈائریکٹر ہیلتھ سروسزکشمیر ڈاکٹر مشتاق احمدراتھر بھی موجودتھے ۔

مزید دیکهے

متعلقہ خبریں