ٹنل کے آ ر پار گرمی کی تپش جاری ، مسلسل دوسرے روز بھی دن کا درجہ حرارت 34ڈگری سے اوپر ریکارڈ

درجہ حرارت میں اضافہ کے نتیجے شہر سرینگر سمیت دیگر علاقوں میںلوگوں کیلئے رات دن تکلیف دہ ثابت
محکمہ موسمیات کی آج سے بارشوں کی پیشگوئی سے لوگوںکو شدید گرمی سے راحت ملنے کا امکان
  جموں کشمیر میں گزشتہ کچھ دنوں سے گرمی کی لہر میںکافی اضافہ کے چلتے مسلسل تیسرے روز بھی شدید گرمی کی لہر کے نتیجے میں لوگوں کو کافی مشکلات کا سامنا ہے ۔ جمعرات کو تیسرے روز بھی لوگوں کو شدید گرمی سے کوئی راحت نہیںملی اوردرجہ حرارت 34ڈگری عبور کر گیا ۔اس دوران اہلیان وادی کو آج سے گرمی کی لہر سے راحت ملنے کا امکان ظاہر کرتے ہوئے محکمہ موسمیات نے بارشوں کی پیشگوئی کی ہے ۔ادھر گرمی کی تپش سے بچنے کیلئے شہر سرینگر کے ساتھ ساتھ وادی کے شمال و جنوب میں نوجوان مختلف ندی نالوں اور دریاﺅں میں چھلانگیں لگا کر اپنے آپ کو ٹھنڈا کر کے راحت محسوس کی ۔ سی این آئی کے مطابق جہاں ماہ جون میں درجہ حرارت میں اضافہ کے نتیجے میں پائی جانے والی شدید گرمی کی وجہ سے اہل وادی کیلئے رات دن تکلیف دہ ثابت ہو رہے ہیں وہیں گرمی میں روز بروز اضافہ ہو رہا ہے جس کی ایک کڑی کے تحت سرینگر میں جمعرات کو ایک بار پھر گرم ترین دن ریکارڈ کیا گیا ۔ جمعرات کو دن بھر شدید گرمی کی لہر جاری رہی جس دوران درجہ حرارت34.7ڈگری سیلشس ریکارڈ کیا گیا ۔ محکمہ موسمیات کے مطابق سرینگر میں جمعرات کو دن کا درجہ حرارت 34.7ڈگری ریکارڈ کیا گیا ۔ محکمہ موسمیات کے مطابق جموں میں بھی گرمی کی شدید لہر جاری ہے اورجمعرات کو جموں میں بھی 40ڈگری سیلشس ریکار ڈ کیا گیا ۔ادھر شدید گرمی کے چلتے محکمہ موسمیات نے آج سے موسمی صورتحال میں تبدیلی آنے کا امکان ظاہر کرتے ہوئے گرمی کی شدت میں کمی آسکتی ہے کیونکہ 11جون سے بارشیں ہوسکتی ہے ۔ اسی دوران شدت گرمی کی تپیش سے بچنے کیلئے نوجوانوں کی طرف سے ندی نالوں اور دیاﺅں کا رخ کیا جاتا ہے اور گرمی سے راحت پانے کیلئے وہ تیراکی کا بھی مزہ لیں رہے ہیں ۔ ادھر جموں میں بھی تپیش کی گرمی بدستور جاری ہے اور جمعرات کا دن جموں میں رواں سال کا سب سے گرم ترین دن ریکارڈ کیا گیا ۔ محکمہ موسمیات کی طرف سے جاری ایک بیان کے مطابق جموں میں جمعرات کو رواں سال کا سب سے زیادہ گرم دن ریکارڈ کیا گیا ۔

مزید دیکهے

متعلقہ خبریں