بھارتی فوجی سربراہ کے بیان پر پاکستان کا شدید ردعمل

سرینگر//﴿آفتاب ویب ڈیسک ﴾ پاکستان نے بھارتی فوجی سربراہ جنرل بپن رائوت کے اُس بیان پر شدید ردعمل کا اظہار کیا ہے ، جس میں جنرل رائوت نے کہا تھا کہ اگر نئی دہلی کی انتظامیہ ہمیں حکم دیتی ہے تو ہم کسی بھی وقت سرحد عبور کر کے پاکستان کو سبق سکھانے اور ان کی جوہری دھمکیوں سے نمٹنے کے لیے تیار ہیں۔میڈیا رپورٹس کے مطابق پاکستانی وزیر خارجہ خواجہ آصف نے بھارتی آرمی چیف کے پاکستان کی جوہری صلاحیت سے متعلق بیان کو انتہائی غیر ذمہ دارانہ قرار دیتے ہوئے کہا ہے کہ بھارتی جنرل کا بیان جوہری تصادم کو دعوت دینے کے مترادف ہے۔سوشل میڈیا پر اپنے پیغام میں خواجہ آصف نے کہا کہ بھارتی آرمی چیف کی جانب سے انتہائی غیر سنجیدہ بیان دیا گیا، اس قسم کا بیان انہیں زیب نہیں دیتا۔اُدھر پاکستانی دفتر خارجہ کے ترجمان ڈاکٹر محمد فیصل نے بھی بھارتی آرمی چیف کے بیان پر کہا کہ بھارتی آرمی چیف کی جانب سے دھمکی آمیز اور غیر ذمہ دارانہ بیان بھارت کے سازشی ذہن کی عکاسی کرتا ہے لیکن پاکستان کسی بھی قسم کی مزاحمت کا جواب دینے کی بھرپور صلاحیت رکھتا ہے۔ڈاکٹر محمد فیصل نے کہا کہ بھارتی آرمی چیف کے بیان کو غیر سنجیدہ نہیں لیا جائے گا، غلط اندازے پر کسی بھی قسم کی کارروائی نہ کی جائے کیونکہ پاکستان اپنی اپنے دفاع کی بھرپور صلاحیت رکھتا ہے۔

مزید دیکهے

متعلقہ خبریں