مذاکرات ہی واحد حل : محبوبہ مفتی

سرینگر//﴿آفتاب ویب ڈیسک ﴾وزیر اعلیٰ محبوبہ مفتی نے کہا ہے کہ ریاست کے عوام یہاں جاری تشد د اور غیر یقینیت سے سب سے زیادہ متاثرہوئے ہیں۔انہوںنے کہا ہے کہ مذاکرات ہی معاملات کو حل کرنے اور ناخوشگوار حالات کے خاتمہ کا بہترین ذریعہ ہیں ۔آج بجٹ اجلاس کے آخری دِن ریاستی قانون سازیہ کے دونوں ایوانوں سے الگ الگ خطاب کرتے ہوئے وزیر اعلیٰ نے کہا کہ جموں وکشمیر کے لوگ پچھلے 30برسوں سے تشدد کے ایک بھنور میں پھنسے ہوئے ہیں اور ان مشکلات اور درد کی وجہ سے وہ بات چیت اور ہندوستان اور پاکستان کے درمیان بہتر رشتوں کا مطالبہ کر رہے ہیں۔وزیر اعلیٰ نے مزید کہا کہ کب تک لوگ مرتے رہیں گے اور ہم گل دائرے چڑھاتے رہیں گے ۔انہوں نے کہا کہ لوگوں تک پہنچنے میں ہی امن اور دوستی کا راز مضمر ہے نہ کہ جنگ میں۔سنجواں فوجی کیمپ پر حالیہ حملے اور ریاست کی سرحدوں پر مسلسل شیلنگ کا ذکر کرتے ہوئے محبوبہ مفتی نے کہا کہ ماضی میں تشدد اور جنگوں کی وجہ سے لوگوں کی مشکلات اور مصائب میں اضافہ ہوا ہے اور اب ریاست کے لوگ اس صورتحال کا خاتمہ چاہتے ہیں تاکہ وہ امن اور اخوت کے ماحول میں زندگی گزار سکیں۔وزیراعلیٰ نے کچھ ٹی وی چینلوں کی طر ف سے ریاست کے بارے میں غیرضروری منافرت پھیلاکر اپنی ٹی آر پیز میں اضافہ کرنے پر افسوس کا اظہار کیا۔ انہوں نے کہا کہ اس عمل سے ریاست کے لوگوں کی ناراضگی میں اضافہ ہوتا ہے ۔انہوںنے ذرائع ابلاغ سے اپیل کی کہ وہ ریاست میں رپورٹنگ کرتے وقت یا پھر ترقیاتی عمل پر بحث و تمحیص کے دوران مثبت رول ادا کریں۔

مزید دیکهے

متعلقہ خبریں