بی جے پی ریاستی صدر کی ہدایت پر احتجاجی ریلی میں شرکت کی :لعل سنگھ وزیراعلیٰ نے دونوں وزرائ کے استعفے گورنر ہائوس روانہ کردئے

سرینگر/ اے پی آئی /جنگلات و ماحولیات کے سابق وزیر نے اس بات کا سنسنی خیز انکشاف کیا کہ ریاستی بی جے پی صدر کی ہدایت پر اس نے اور صنعت و حرفت کے وزیر نے ہندو ایکتا منچ کی جانب سے منعقد کی گئی احتجاجی ریلی میں شرکت کی ،کابینہ سے واپس بلائے گئے بھارتیہ جنتا پارٹی کے دونوں وزیروں کے استعفیٰ کو منظور کرتے/جاری صفحہ نمبر۱۱پر
 ہوئے وزیر اعلیٰ نے مزید کارروائی کیلئے گورنر کو ارسال کئے ۔ جنگلات و ماحولیات کے سابق وزیر چودھری لعل سنگھ نے اپنے ایک دن کے بیان سے یوٹرن لیتے ہوئے کہا کہ اس نے اور صنعت و حرفت کے سابق وزیر چندر پرکاش گنگا نے بھارتیہ جنتا پارٹی کے ریاستی صدر ستپال شرما کی ہدایت پر ہندو ایکتا منچ کی جانب سے منعقد کی گئی ریلی میں شرکت کی ۔ واضح رہے کہ چودھری لعل سنگھ نے 14اپریل کو نئی دہلی کی ایک الیکٹرانک نیوز چینل کے ساتھ گفتگو کرتے ہوئے کہا تھا کہ وہ اور اس کا دوسرا ساتھی امن و امان کو قائم رکھنے اور فرقہ وارانہ فسادات کو روکنے کیلئے ہندو ایکتا منچ کی ریلی میں شا مل ہوئے تھے ۔ خبر رساں ادارے اے پی آئی نے جب بھارتیہ جنتا پارٹی کے ریاستی صدر ستپال شرما کے ساتھ رابطہ کرنا چاہا تو انہوںنے فون اٹھانے کی زحمت گوارا نہیں کی جبکہ بی جے پی کے سینئر لیڈر اور ممبر پارلیمنٹ شمشیر سنگھ منہاس نے کہا کہ چودھری لعل سنگھ حواس باختہ ہو گئے ہیں اور اناپ شناپ بکنے میں کوئی تمیز نہیں کرتے ۔ممبر پارلیمنٹ نے کہا کہ دونوں وزیروں کو کابینہ سے واپس بلایا گیا ہے مزیدکیا کارروائی عمل میں لانی ہو گی اس کے بارے میں بھی اقدامات اٹھانے سے گریز نہیں کیا جائیگا ۔ا دھر کابینہ سے واپس بلائے گئے بھارتیہ جنتا پارٹی کے دونوں وزیروں کے استعفیٰ کو وزیر اعلیٰ نے منظور کرتے ہوئے مزید کارروائی کیلئے ریاست کے گورنر کے سیکریٹریٹ کو روانہ کر دئیے۔

مزید دیکهے

متعلقہ خبریں