ExecuteReader requires an open and available Connection. The connection's current state is connecting.Object reference not set to an instance of an object. ضلع سرینگر کیلئے 149.54 کروڑ روپے کی رقم منظور وزیراعلیٰ نے سکمز کے کینسر سنٹر کو قایم کرنے کیلئے پانچ کروڑ روپے کا اعلان کیا بجلی کی کٹوتی سے نمٹنے کیلئے شہر کی گرڈ گنجائش میں اضافہ کیا جا رہا ہے

ضلع سرینگر کیلئے 149.54 کروڑ روپے کی رقم منظور وزیراعلیٰ نے سکمز کے کینسر سنٹر کو قایم کرنے کیلئے پانچ کروڑ روپے کا اعلان کیا بجلی کی کٹوتی سے نمٹنے کیلئے شہر کی گرڈ گنجائش میں اضافہ کیا جا رہا ہے

سرینگر/وزیر اعلیٰ محبوبہ مفتی نے آج ضلع سرینگر کیلئے سماجی بنیادی ڈھانچے کو از سر نو تعمیر کرنے کے سلسلے میں تمام حلقہ انتخاب اسمبلی کیلئے ایک کروڑ روپے کی واگذاری کا اعلان کیا ۔ سال 2018-19 کیلئے ضلع سرینگر کے مالی منصوبے کی 14954 کروڑ روپے کی رقم منظور کی ۔ ضلع سرینگر کی ضلع ترقیاتی بورڈ میٹنگ کی صدارت کرتے ہوئے وزیر اعلیٰ نے سکمز میں ایک کینسر سنٹر قایم کرنے کیلئے 5 کروڑ روپے واگذار کرنے کا اعلان کیا ۔ اسی طرح جموں میں کینسر سنٹر قایم کرنے کیلئے 5 کروڑ روپے کی واگذاری کا اعلان کیا گیا ۔ وزیر اعلیٰ نے شہر کے مختلف علاقوں میں بالخصوص شہر خاص میں کمیونٹی ہال تعمیر کرنے کیلئے دس کروڑ روپے کی رقم مختص کرنے کی ہدایت دی ۔ وزرائ جن میں سید الطاف بخاری ، جاوید احمد میر ، /جاری صفحہ نمبر ۱۱پر
محمد اشرف میر ، آسیہ نقاش ، ارکانِ قانون دسازیہ علی محمد ساگر ، مبارک گُل ، شمیمہ فردوس ، نور محمد ، مولوی عابد انصاری ، اشفاق جبار ، خورشید عالم اور انجم فاضلی نے میٹنگ میں شرکت کی ۔ محبوبہ مفتی نے شہر سرینگر بالخصوص شہر خاص میں گلیوں اور ڈرینوں کی مرمت کرنے ، سڑکوں پر تار کول بچھانے ، بجلی کی تقسیم کاری میں استحکام لانے کے سلسلے میں ہر حلقہ انتخاب اسمبلی کیلئے ایک کروڑ روپے کی فراہمی کا اعلان کیا اور ان کاموں پر بہتر طریقے سے صرف کرنے کی ہدایت دی ۔ انہوں نے کہا کہ شہر میں اور زیادہ پارکیں اور سبزہ زار کو ترقی دینے کی ضرورت ہے ۔ انہوں نے کہا کہ جب تک سمارٹ سٹی پروجیکٹ عمل میں لایا جا رہا ہے تب تک ترجیحی بنیادوں پر یہ سہولیات شہر میں قایم کرنی ہوں گی ۔ وزیر اعلیٰ نے رڈ پورہ سٹیڈیم کو فوراً چالو کرنے ، عید گاہ میں بچوں کی پارک قایم کرنے کیلئے اراضی کے ایک حصے کی نشاندہی کرنے کی بھی ہدایت دی ۔ انہوں نے عید گاہ میں محکمہ سیاحت کی طرف سے ایک ہیری ٹیج گیٹ کو مکمل کرنے کی بھی ہدایت دی ۔ اس مقصد کیلئے انہوں نے آئی جی پی کشمیر زون سے کہا کہ وہ سی آر پی ایف کے ساتھ یہ معاملہ اٹھائیں ۔ انہوں نے محکمہ صحت سے کہا کہ وہ غوثیہ ہسپتال کے پاس قایم کی گئی دوکانوں کو ہسپتال کے نزدیک ہی دوسری جگہ پر منتقل کرنے کے امکانات تلاش کرے تا کہ یہ جگہ ہسپتال کی سرگرمیوں کیلئے استعمال کی جا سکے ۔ میٹنگ میں بتایا گیا کہ شہر میں جلد ہی 5 پُل مکمل کئے جا رہے ہیں ۔ میٹنگ میں یہ بھی بتایا گیا کہ شہر میں ٹریفک کے دباؤ کو کم کرنے کے سلسلے میں گریڈ سپریٹرز کو قایم کرنے کیلئے نئی دہلی سے ایک ماہرٹیم سرینگر آ رہی ہے ۔ اس کے علاوہ میٹنگ میں بتایا گیا کہ ایم اے روڈ پر ایس پی ایس لائیبریری کمپلیکس اور زاکورہ اور باغ دلاور خان میں دو کالج تکمیل کے مراحل سے گذر رہے ہیں ۔ اس کے علاوہ کلسٹر یونیورسٹی سرینگر کا افتتاح بھی بہت جلد کیا جا رہا ہے ۔ لل دید ہسپتال کے دو اضافی بلاکوں پر کام جاری ہے اور منی سیکرٹریٹ بٹہ مالو کی تعمیر عمل میں لانے کیلئے دکانداروں کو دوسری جگہ منتقل کرنے کے لئے معاوضے کے طور پر 19 کروڑ روپے کا ایک پروجیکٹ بھی بنایا گیا ہے ۔ میٹنگ میں یہ بھی بتایا گیا کہ ڈائیٹ کمپلیکس بمنہ پر تعمیراتی کام تقریباً مکمل کیا گیا ہے ۔ وزیر اعلیٰ نے پروجیکٹوں میں قیمت کے اضافے کی وجوہات پر غور کرنے کی ہدایت دی اور اس طرح کے مسائل کو روکنے کی بھی ہدایت دی تا کہ کوئی بھی پروجیکٹ رقومات کی عدم دستیابی کی وجہ سے تاخیر کا شکار نہ ہو ۔ میٹنگ میں بتایا گیا کہ ضلع میں کھیل کود اور نوجوانوں کی سرگرمیوں کے65 کروڑ روپے کے پروجیکٹوں پر کام جاری ہے ۔ میٹنگ میں بتایا گیا کہ پاور ڈیولپمنٹ ڈیپارٹمنٹ کے گرڈ سٹیشنوںکے مسئلے سے نمٹنے کیلئے اُن کی گنجائش بڑھائی جا رہی ہے اور چند نئے گرڈ سٹیشن قایم کئے جا رہے ہیں ۔ آلسٹینگ گرڈ سٹیشن اس سال اکتوبر میں چالو کرنے کی توقع ہے ۔ اس کے ساتھ ہی سرینگر ۔ کرگل ۔ لیہہ ٹرانسمیشن لائین کو بھی چالو کیا جائے گا ۔ اس کے علاوہ باغ علی مردان خان ٹینگ پورہ کے گرڈ سٹیشنوں پر تعمیری کام جلد ہی شروع کیا جائے گا ۔ میٹنگ میں بتایا گیا کہ سرینگر شہر کے موجودہ گرڈ سٹیشنوں کی گنجایش میں وسعت لائی جا رہی ہے اور بجلی کی کٹوتی سے نمٹنے کیلئے مزید ٹرانسفارمر نصف کئے جا رہے ہیں ۔ یہ اقدامات سردیوں کے موسم میں بجلی میں خلل کو روکنے کیلئے اٹھائے جا رہے ہیں ۔ محبوبہ مفتی نے چیف سیکرٹری کو ہدایت دی کہ وہ لگاتار ان گرڈ سٹیشنوں پر جاری کام اور گنجائش بڑھانے کے عمل کی نگرانی کریں تا کہ اس سال موسم سرما سے پہلے یہ گرڈ سٹیشن چالو کئے جا سکیں ۔ انہوں نے ڈویژنل کمشنر کشمیر کو ہدایت دی کہ وہ ان گرڈ سٹیشنوں سے متعلق حصولِ اراضی کے معاملات کو نمٹائیں ۔ بعد میں بورڈ نے سال 2018-19 کیلئے ضلع سرینگر کیلئے 149.54 کروڑ روپے کے منصوبے کی منظوری دی ۔ چیف سیکرٹری بی بی ویاس ، فائنانشل کمشنر مکانات و شہری ترقی کے بی اگروال ، تمام محکموں کے انتظامی سیکرٹری ، ڈویژنل کمشنر کشمیر بصیر احمد خان ، آئی جی پی کشمیر زون ایس پی پانی ، تمام محکموں کے سربراہان ، صوبائی و ضلع انتظامیہ کے افسران میٹنگ میں موجود تھے ۔

مزید دیکهے

متعلقہ خبریں