کوانٹیکو میں ہندو شدت پسند پلاٹ پر پرینکا چوپڑا کی معافی

سرینگر/ مانٹرنگ/ امریکی ٹیلی ویژن سیریز ’کوانٹیکو‘ کی ایک قسط میں ہندو شدت پسندوں کے بارے میں ایک کہانی پر پرینکا چوپڑا نے معافی مانگ لی ہے۔ کوانٹیکو کی ایک حالیہ قسط میں دکھایا گیا کہ کشمیر کے معاملے پر ہونیوالے ایک اجلاس پر ہندو شدت پسند حملے کا منصوبہ بناتے ہیں۔ اس ڈرامے میں بالی وڈ کی اداکارہ پرینکا چوپڑا مرکزی کردار ادا کر رہی ہیں۔ پرینکا چوپڑا نے ایک ٹویٹ میں خود کو ’بافخر انڈین‘ قرار دیتے ہوئے کا کہ انہیں اس بات پر بہت دکھ ہے کہ اس شو کی وجہ سے لوگوں کی دل آزاری ہوئی۔ ’بلڈ آف رومیو‘ کے عنوان سے یہ کہانی یکم جون کو نشر ہوئی جس کے مرکزی کرداروں میں شامل ایلکس پیرش اس دہشت گرد حملے کو روکتے ہیں۔ کہانی میں دکھایا گیا کہ پاکستانی شدت پسند امریکہ میں پاکستان اور انڈیا کے درمیان متنازع علاقے کشمیر کے بارے میں ہونے والے ایک اجلاس پر حملے کی منصوبہ بندی کرتے ہیں تاہم پرینکا چوپڑا یہ پتا لگا لیتی ہیں کہ دراصل یہ منصوبہ ہندو شدت پسندوں کا ہوتا ہے جو پاکستان کو بدنام کرنا چاہتے ہیں۔ انڈین شائقین نے اس ڈرامہ کے نشر ہونے کے بعد پرینکا چوپڑا کو ’انڈیا کی توہین‘ کہتے ہوئے اسے ہندوؤں پر حملہ قرار دیا۔ اس سے پہلے ڈرامہ نشر کرنے والے چینل اے بی سی نے بھی ایک بیان جاری کرتے ہوئے کہا تھا کہ وہ ایک پیچیدہ سیاسی مسئلہ میں دخل اندازی کرنے پر معذرت چاہتے ہیں۔ چینل نے پرینکا چوپڑا کا دفاع کرتے ہوئے کہا کہ انہوںنے یہ کہانی نہ لکھی ہے اور نہ اس کی ہدایت کاری کی اور نہ ہی کہانی کے پلاٹ میں ان کا کوئی کردار رہا۔‘

مزید دیکهے

متعلقہ خبریں