مغل روڈ پرناکہ پولیس پارٹی کی ڈرامائی کارروائی 2/ نوجوان رایفل سمیت گرفتار

سرینگر/نیازحسین / کے این این /ریاستی پولیس نے پیر کے روز دعویٰ کیا کہ ایک ڈرامائی کارروائی کے دوران مغل روڑ ناکہ پولیس پارٹی نے اسلحہ اُڑانے کا معمہ محض چند گھنٹوں بعد ہی حل کردیا جبکہ2حملہ کو اُڑائی گئی بندوق سمیت گرفتار کیا گیا ۔پولیس کا کہنا ہے کہ/جاری صفحہ نمبر ۱۱پر
 دو ونوں نے پیر کی صبح شاہدارہ شریف راجوری میں کی حفاظت پر مامور اہلکاروں کی ایک رائفل اُڑالی اور فرار ہونے کیلئے مغل روڑ کا راستہ اختیا ر کیا جبکہ گرفتار کے دونوں نوجوانوں کا تعلق جنوبی کشمیر سے ہے ۔ ریاستی پولیس نے راجوری میں واقع شاہدارہ شریف کی حفاظت پر تعینات اہلکار سے انساس رائفل چھینے کا معمہ پولیس نے محض چند گھنٹوں میں ہی حل کیا جبکہ اُڑالی بندوق بھی برآمد کی گئی ۔پولیس کے مطابق اس سلسلے میں رائفل کو چرانے والے دو نوجوانوں جن کا تعلق جنوبی کشمیر کے ضلع شوپیان سے ہے، کو گرفتار کرلیا گیا ہے۔ایک سینئر پولیس افسر نے کہا کہ’شوپیان سے تعلق رکھنے والے 2 نوجوانوں نے اتوار کی شب شاہدرہ شریف میں قائم پولیس چوکی سے ایک انساس رائفلیں اور اس کی تین میگزینیں اُڑلی۔انہوں نے کہا کہ واقعہ کے فوراً بعد الرٹ جاری کیا گیا جبکہ مغل روڑ پر بھی ناکے لگائے گئے ۔انہوں نے کہا کہ مغل روڑ پر تعینات پولیس ،38آر آر اور سی آر پی ایف72بٹالین کی مشترکہ ناکہ پارٹی نے 2موٹر سائیکل سواروں کو تھانہ منڈی کے مقام پر تلاشی کارروائی کے لئے روکا ،جس دوران دو نوں موٹر سائیکل سواروں کی تحویل سے پولیس کی ایک انساس رائفل اور میگزینیں برآمد کی گئیں ،جو شاہدارہ شریف کی زیارت پر واقع پولیس چوکی سے چوکی گئی تھی۔پولیس کا کہنا ہے کہ دونوں کو پوچھ تاچھ کیلئے حراست میں لیا گیا ۔معلوم ہوا ہے کہ گرفتار شدگان میں 22مختار احمد ولد عبدالحد ڈار ساکنہ نیو کالونی صفانگری ﴿زینہ پورہ ﴾ شوپیا ن اور اعجاز احمد پرے ولد ثنااللہ پرے ساکنہ کیشوا چھتر گام شوپیان شامل ہے ۔پولیس نے معاملے کی نسبت ایک ایف آئی آر زیر نمبر97/2018دفعہ307،120B،آر پی سی 7/27آر مز ایکٹ اور دیگر دفعات کے تحت کیس درج کرکے مزید تحقیقات شروع کردی گئی ۔

مزید دیکهے

متعلقہ خبریں