بنگلہ دیش میں شدید بارش اور پسیاں گر آنے سے 12روہنگیا مہاجرین ہلاک

سرینگر//﴿آفتاب ویب ڈیسک﴾ بنگلہ دیش میں بارش اور لینڈ سلائیڈنگ کے نتیجے میں روہنگیا مہاجرین کے کیمپوں کے قریب کم ازکم 12 افراد جاں بحق ہوگئے۔ امدادی تنظیموں کی جانب سے آنے والے مہینوں میں بنگلہ دیش میں ہونے والے بارشوں سے دنیا کے سب سے بڑے مہاجرین کی بستی میں انسانی بحران پیدا ہونے کی وارننگ دی گئی تھی۔ میڈیا رپورٹس کے مطابق تازہ بارشوں کے دوران اکثر ہلاکتیں پہاڑی علاقے میں مٹی کے تودے تلے دبنے سے ہوئیں۔حکام کا کہنا ہے کہ نانیارچار کے علاقے میں ایک ہی خاندان کے چار ارکان سمیت 11 افراد جاں بحق ہوگئے جبکہ درجنوں ابھی بھی لاپتہ ہیں۔پولیس کے مطابق ضلع کوکس بازار میں ایک شخص جاں بحق ہوگیا۔انتظامیہ اور امدادی تنظیموں کے عہدیداران کا کہنا تھا کہ بارشوں کے باعث پہاڑی علاقے میں قائم مہاجر کیمپ میں موجود 2 لاکھ روہنگیا افراد کو جانی نقصان پہنچنے کا خدشہ ہے۔بارشوں کے پیش نظر 29 ہزار کے قریب افراد کو خطرناک علاقوں سے دیگر علاقوں میں منتقل کردیا گیا ہے۔دوسری جانب بارشوں کے بعد مہاجر کیمپوں میں بیماریاں پھیلانے کا بھی خدشہ ہے۔مہاجر کیمپوں میں گزشتہ برس اگست میں میانمار کی ریاست رکھائن میں ہوئے فسادات کے بعد نقل مکانی کرنے والے 7 لاکھ کے قریب افراد موجود ہیں۔

مزید دیکهے

متعلقہ خبریں