چنڈیمل اور دو سری لنکائی افسران جنوبی افریقہ ٹیسٹ سیریز سے باہر

گالے/یواین آئی/ سری لنکا کے کپتان دنیش چنڈیمل اور اس کے دو کرکٹ افسران جنوبی افریقہ کے خلاف دو ٹیسٹ میچوں کی سیریز میں حصہ نہیں لیں گے ۔ سبھی کو آئی سی سی نے گزشتہ ماہ ویسٹ انڈیز کے دورے پر کھیل جذبہ کی خلاف ورزی کرنے کا قصوروار ٹھہرایا ہے ۔بین الاقوامی کرکٹ کونسل ﴿آئی سی سی﴾ نے جمعرات کو اس کی اطلاع دی کہ جنوبی افریقہ کے خلاف گالے میں پہلے ٹیسٹ سے قبل رات بھر چلی جوڈیشیل کمیشن کی میٹنگ میں سری لنکا کے کپتان اور اس کے افسران کو گزشتہ ماہ ویسٹ انڈیز کے دورے میں بال ٹیمپرنگ معاملے کے بعد سزا کے خلاف بحث کرنے اور کھیل جذبہ کی خلاف ورزی کرنے کے معاملے میں قصوروار پایا گیا ہے ۔کپتان چنڈیمل کے علاوہ دو سری لنکا ئی کرکٹ حکام میں کوچ چنڈکا ھتھروسنگھا اور مینیجر اسانکا گروسنھا کو ویسٹ انڈیز اور سری لنکا کے درمیان دوسرے ٹیسٹ کے دوران کھیل جذبہ کی خلاف ورزی کرنے کے معاملے میں قصوروار قرار دیا گیا ہے ۔ ایسے میں تینوں کو جنوبی افریقہ کے خلاف گالے میں جمعرات سے شروع ہونے والی دو ٹسٹ میچوں کی سیریز میں حصہ لینے کی اجازت نہیں ہو گی۔آئی سی سی نے اپنے ٹوئٹر پر کہا "عبوری جانچ میں چنڈیمل، ھتھروسنگھا اور گروسنھا کو قصوروار پایا گیا ہے ، سبھی نے جنوبی افریقہ کے خلاف دونوں ٹسٹ میچوں سے باہر بیٹھنے پر رضامندی ظاہر کی ہے ۔ اسے آئی سی سی کے کرکٹ کمشنر کے ذریعہ انہیں دی گئی سزا میں شمار کیا جائے گا۔ "آئی سی سی کے چیف ایگزیکٹو آفیسر ڈیوڈ رچرڈسن نے تینوں کو قصوروار ٹھہرایا تھا۔ سری لنکا اور ویسٹ انڈیز کے درمیان ہوئی ٹسٹ سیریز کے سینٹ لوسیا میں دوسرے میچ کے تیسرے دن گیند کے ساتھ چھیڑ چھاڑ کے معاملے میں چنڈیمل کو قصوروار پایا گیا تھا۔اس کے اگلے دن حریف ویسٹ انڈیز ٹیم کو پانچ رن ایکسٹرا دیئے گئے تھے ۔ سری لنکا کی ٹیم نے اس فیصلے کی مخالفت کی تھی اور میچ کے لیے میدان پر آنے سے انکار کر دیا تھا، جس کی وجہ سے میچ دو گھنٹے تاخیر سے شروع ہو ا تھا۔ چنڈیمل نے بال ٹیمپرنگ کے الزامات سے انکار کیا تھا لیکن ان کی اپیل خارج ہونے کی وجہ سے ان پر ایک میچ کی پابندی اور میچ فیس کا جرمانہ عائد کیا گیا تھا۔ میچ ریفری جواگل سری ناتھ نے چنڈیمل کو یہ سزا سنائی تھی جسے بعد میں آئی سی سی نے برقرار رکھا تھا۔

مزید دیکهے

متعلقہ خبریں