فاروق عبداللہ کے بنگلے میں نوجوان کی ہلاکت ڈی جی پی اور آئی جی پی جموں سے رپورٹ طلب

سرینگر/ کے این این /ریاستی حقوق انسانی کمیشن نے سابق وزیراعلیٰ ڈاکٹرفاروق عبداللہ کی بٹھنڈی جموں میں واقع نجی رہائش گاہ پرگزشتہ دنوں25سالہ نوجوان سیدمرفدشاہ کی پُراسرارہلاکت کے واقعے کانوٹس لیتے ہوئے پولیس چیف اورپولیس کے صوبائی سربراہ جموں کے نام الگ الگ نوٹسیں جاری کیں ،اورپولیس حکام سے اس واقعے کے بارے میں رپورٹ طلب کرلی۔معلوم ہواکہ اسٹیٹ ہیومن رائٹس کمیشن نے جموں کے بٹھنڈی علاقہ میں واقع ڈاکٹرفاروق عبداللہ کی رہائش گاہ پرتعینات/جاری صفحہ نمبر۱۱پر
 فورسزاہلکاروں کی جانب سے ایک نوجوان کوگولیوں کانشانہ بناکرابدی نیندسلادینے کے واقعے کے سلسلے میں ڈی جی پی اورآئی جی پی جموں زون کے نام نوٹسیں جاری کرتے ہوئے دونوں اعلیٰ پولیس حکام سے اس واقعے کی مناسبت سے ایک ماہ کے اندراندررپورٹیں پیش کرنے کوکہا۔ایس ایچ آرسی نے 25سالہ سیدمرفدشاہ کی پُراسرارہلاکت کے بارے میں پولیس حکام سے رپورٹ طلب کرتے ہوئے یہ ہدایت دی ہے کہ کمیشن کواسبارے میں مکمل جانکاری فراہم کی جائے کہ کن حالات میں نوجوان کی گولیاں لگنے سے مو ت واقعہ ہوئی اورپولیس نے اس واقعے کی مناسبت سے ابتک کیاکارروائی عمل میں لائی ۔ریاستی حقوق انسانی کمیشن نے اس معاملے کی اگلی شنوائی کیلئے10ستمبرکی تاریخ مقررکردی۔

مزید دیکهے

متعلقہ خبریں