لہیہ میں بادل پھٹنے سے بڑے پیمانے تباہی کئی رہائشی مکانات ،گاڑیوں ،فصلوں کو شدید نقصان ،بچائو آپریشن جاری

سرینگر/ کے این این /لہیہ لداخ کے بدھ اور جمعرات کی درمیانی رات کو موسلادھار بارشوں کے بیچ بادل پھٹنے اور مٹی کے تودے گرآنے سے 2دیہات سابو اور شی میں بڑے پیمانے پر تباہی ہوئی ۔سیلابی ریلے اور مٹی کے تودے گرآنے سے رہائشی مکانات ،گاڑیوں اور فصلوں کو بڑے پیمانے پر نقصان پہنچا،تاہم یہاں کسی جانی نقصان کی کوئی اطلاع نہیں ہے جبکہ یہاں ریسکیو آپریشن جاری ہے ۔ خطہ لداخ کے لہیہ ضلعے میں بادل پھٹنے سے بڑے پیمانے پر تباہی ہوئی ،تاہم اس میں کسی جانی نقصان کی کوئی اطلاع نہیں ہے ۔ایس ڈی آر ایف اور دیگر ریسکیو /جاری صفحہ نمبر۱۱پر
 ٹیمیں یہاں بچائو اور راحت رسانی کی خدمات انجام دے رہی ہیں۔معلوم ہوا ہے کہ 8اور9اگست کی درمیانی رات کو لہیہ لداخ کے سابو اور شی دیہات میں موسلادھار بارشوں کے دوران بادل پھٹ آنے سے دونوں دیہات بری طرح سے متاثر ہوئے ۔دوران شب یہاں سیلابی صورتحال پیدا ہونے سے خوف وہراس کی لہر دوڑ گئی جبکہ مقامی آبادی گھروں میں محصور ہو کرہ گئی ۔اس سلسلے میں پولیس کے ایک ترجمان نے بتایا کہ موسلادھار بارشوں کے باعث بدھ اور جمعرات کی درمیانی رات کو فلش فلڈ اور مٹی کے تودے گرآنے سے سابو اور شی لہیہ کے دو دیہات بری طرح سے متاثر ہوئے۔انہوں نے کہا کہ یہاں دو گاڑیاں ،دو موٹر سائیکل ،کئی رہائشی مکانات ،اور فصلوں کو شدید نقصان پہنچا ۔ان کا کہناتھا کہ اطلاع ملتے ہی پولیس ،ایس ڈی آر ایف آئی ٹی بی پی اور دیگر ریسکیو ٹیموں نے بچائو آپریشن عمل میں لایا۔ان کا کہناتھا کہ ریسکیو ٹیموں نے مقامی لوگوں کو مویشیوں سمیت محفوظ مقامات پر منتقل کیا گیا جبکہ4غیر ملکی سیاحوں کو بھی بحفاظت باہر نکالا گیا۔پولیس ترجمان کے مطابق سیلابی ریلوں اور مٹی کے تودے گرآنے سے رہائشی مکانات ،گاڑیوں اور فصلوں کو شدید نقصان پہنچا ،تاہم اس واقعہ میں کسی جانی نقصان کی کوئی اطلاع نہیں ہے۔

مزید دیکهے

متعلقہ خبریں