دن کے بجائے رات کی تاریکی میں کریک ڈائون پلوامہ کے درجنوں دیہات میں گھرگھر تلاشیاں اور مکینوں سے پوچھ گچھ ، عوام سراپا احتجاج

سرینگر/ یو پی آئی /جنوبی کشمیر میں بڑے پیمانے پر جنگجو مخالف آپریشن شروع کرتے ہوئے سیکورٹی فورسز نے درمیانی رات کو وندکھ پورہ ، کاکہ پورہ ، چند پورہ ، ہانجن راجپورہ اور ٹہاب گائوں کو محاصرے میں لے کر گھر گھر تلاشی لی ۔ اس دوران سانبورہ ، موہند ، وہی بوگ ، گوسو اور نائر ہ پلوامہ میں سیب کے باغات کی رات بھر تلاشی لی گئی تاہم اس دوران کسی کی گرفتاری عمل میں نہیںلا گئی ۔ معلوم ہوا ہے کہ پنچایتی اور بلدیاتی انتخابات کو پُر امن طورپر کرانے کیلئے سرگرم عسکریت پسندوں کے خلاف بڑے پیمانے پر جنگجو مخالف آپریشن شروع کرنے کا امکان ہے۔ پلوامہ ، شوپیاں اور کولگام اضلاع میں سیکورٹی فورسز کو متحرک رہنے کے احکامات صادر کئے گئے ہیں۔ سیکورٹی فورسز نے جنوبی ضلع پلوامہ میں سرگرم عسکریت پسندوں کے خلاف بڑے پیمانے پر آپریشن شروع کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔ معلوم ہوا ہے کہ 12اور 13ستمبر کی درمیانی رات کو سیکورٹی فورسز نے پلوامہ کے وندکھ پورہ ، کاکہ پورہ ، چند پورہ ، ہانجن ، راجپورہ اور ٹہاب گائوں کو
 محاصرے میں لے کر گھر گھر تلاشی لی جس دوران مکینوں کے شناختی کارڈ باریک بینی سے چیک کئے گئے۔ معلوم ہوا ہے کہ سیکورٹی فورسز نے تلاشی کے دوران مکینوں کے ساتھ پوچھ تاچھ کی ۔ مقامی ذرائع نے بتایا کہ رات ایک بجے تک سیکورٹی فورسز نے گھر گھر تلاشی لی جس دوران کسی کو بھی گھروں سے باہر آنے کی اجازت نہیں دی گئی ۔ ادھر سیکورٹی فورسز نے جنوبی ضلع پلوامہ کے سیب کے باغات میں بھی تلاشی آپریشن میں تیزی لائی ہے۔ نمائندے کے مطابق حفاظتی عملے نے سانبورہ ، پانپور ، موہند، وہی بوگ ، گوسو اور نائر ہ پلوامہ علاقوں میں سیب کے باغات کی باریک بینی سے تلاشی لی ۔ مقامی ذرائع نے بتایا کہ سرینگر سے/جاری صفحہ نمبر ۱۱پر
 بھی فوج کو طلب کیا گیا تھا اور رات بھر سیب کے باغات کی باریک بینی سے تلاشی لی گئی جس دوران سونگھنے والے کتوں کی بھی خدمات حاصل کی گئی تاہم عسکریت پسندوں کا پر اتہ پتہ نہیں چل سکا۔ ذرائع کا کہنا ہے کہ پنچایتی اور بلدیاتی انتخابات سے قبل ماحول کو سازگار بنانے کیلئے سر گرم جنگجوئوں کے خلاف بڑے پیمانے پر آپریشن شروع کرنے کا قوی امکان ہے ۔ ذرائع کا مزید کہنا ہے کہ پلوامہ ، شوپیاں اور کولگام اضلاع میں اضافی سیکورٹی فورسز کے اہلکاروں کو بھی تعینات کیا گیا ہے تاکہ کسی بھی ہنگامی صورتحال سے نمٹا جا سکے۔ دفاعی ذرائع نے اس بات کی تصدیق کی کہ جنوبی کشمیر کے ایک درجن سے زائد علاقوں میں درمیانی رات کو گھر گھر تلاشی لی گئی ۔ دفاعی ذرائع کا کہنا ہے کہ عسکریت پسندوں کی نقل وحرکت کی اطلاع ملنے کے بعد فوج اور پیرا ملٹری فورسز نے مشترکہ طورپر پلوامہ میں سیب کے باغات اور رہائشی مکانات کی تلاشی لی تاہم اس دوران کوئی قابل اعتراض شئے برآمد نہیں ہوسکی ۔

مزید دیکهے

متعلقہ خبریں