جنوبی کشمیر میں نئے فوجی کیمپوں کے قیام کے بعد شہر کے مختلف علاقوں میں نئے سرے سے بنکر وں کی تعمیر شروع

 سرینگر/سی این آئی/ جنوبی کشمیر کے مختلف علاقوںمیں فوجی بنکروں کی تعمیر اور فوجی کیمپوں کو قائم کئے جانے کے ساتھ ساتھ شہر سرینگر میں 90کے طرز پر نئے سرے سے فوجی بنکروں کی تعمیر کی جارہی ہے ۔جس کی وجہ سے لوگوں میں تشویش کی لہر دوڑ گئی ہے ۔گذشتہ کئی ماہ سے سرینگر میں بھی تشددآمیز کارروائیوں میں اضافہ دیکھنے کو ملا اور کئی ملٹنسی کی وارداتیں رونمائ ہوئی ، سرکاری سطح پر اگر چہ دعوے کئے جارہے ہیں کہ وادی کشمیر میں عسکریت میں کمی واقع ہوئی ہے تاہم وادی کے مختلف علاقوں میں نئے سرے سے فوجی بنکر اور فوجی کیمپو ں کا جال نئے سرے سے بچھایا جارہا ہے ۔ شہر سرینگر کے علمگری بازار،کھونہ کھن نزدیک ٹرانسپورٹ یارڈ اور دیگر جگہوں پر سڑکوں کے برلب مٹی سے لدی بوریوں کا استعمال کرتے ہوئے بنکروں کو تعمیر کیا جارہا ہے ۔ جبکہ پُرانے بنکروں پر ایک بار پھر جال لگائی جارہی ہے جس کی وجہ سے سڑکیں مزید سکڑ کے رہ گئی ہیں اور ٹریفک کی آواجاہی پر بھی کافی اثرا پڑرہا ہے ۔جنوبی کشمیر میںجنگجوئیانہ کارروائیوں میں اضافہ کے پیش نظر کولگام اور شوپیاں کے کئی علاقوں میں نئے سرے سے فوجی کیمپوں کا قیام عمل میں لایا گیا جس کے خلاف مقامی لوگوں کے ساتھ ساتھ مزاحمتی جماعتوں نے سخت ردعمل کااظہار کیا ہے ۔

مزید دیکهے

متعلقہ خبریں