اقوام متحدہ کی جنرل اسمبلی میں کیوبا پر امریکی پابندیوں کی مذمت

اقوام متحدہ ﴿یو این آئی﴾ اقوام متحدہ کی جنرل اسمبلی نے کیوبا میں انسانی حقوق کی خامیوں سے متعلق امریکی ترمیمی قرار داد کو مسترد کر تے ہوئے کیوبا پر امریکی اقتصادی پابندیوں کی مذمت کرنے کی قرارداد کو منظوری دے دی۔ امریکہ نے اپنی قرار داد میں 9ترامیم منظور کرنے کی تجویز پیش کی تھی، لیکن اقوام متحدہ کی جنرل اسمبلی نے انہیں مسترد کر دیا۔اقوام متحدہ کی جنرل اسمبلی میں جمعرات کو ہونے والی ووٹنگ میں 19رکن ممالک میں سے 189ممالک نے کیوبا کی طرف سے پیش کی گئي قرار داد کی حمایت میں ووٹ دیا جبکہ امریکہ اور اسرائیل نے اس کی مخالفت میں ووٹ دیا ۔ مالد وا اور یوکرین نے ووٹنگ میں حصہ نہیں لیا۔ روسی خبر رساں ایجنسی طاس کی رپورٹ کے مطابق کیوبا کے وزیر خارجہ برونو روڈریگیز نے کہا کہ یہ ناکہ بندی کیوبا کے لوگوں کے حقوق کی کھلی خلاف ورزی ہے اور کئی نسلوں کی فلاح و بہبود میں اہم رکاوٹ ہے ۔ انہوں نے کہا کہ امریکی محاصرہ جارحیت اور اقتصادی جنگ کی کارروائی ہے جو امن اور عالمی نظام کی خلاف ورزی ہے ، اور اقوام متحدہ کے اعلامیہ کے مقصد اور اصولوں کے برعکس ہے ۔ اقوام متحدہ میں امریکی سفیر نے ووٹنگ کو وقت کی بربادیبتایا اور ووٹ سے پہلے کہا کہ ہماری پابندی کی وجہ ہے ، کیوبا نے ہمیشہ آزادی سے انکار کیا اور کیوبا میں لوگوں کو سب سے بنیادی انسانی حقوق سے محروم کیا گیا ہے۔

مزید دیکهے

متعلقہ خبریں