میکسیکو سرحد سے متصل ریاستوں میں ہزاروں فوجی تعینات

نیویارک﴿یو این آئی﴾وسطی امریکہ سے تارکین وطن کے بڑے قافلہ کو روکنے کے لیے اقدامات کر دئیے گئے ، پنٹاگن نے میکسیکو سرحد سے متصل ریاستوں میں 5ہزار کے قریب فوجی تعینات کردئیے ، مزید اہلکار تعینات ہونگے ۔امریکی محکمہ دفاع کے ترجمان کرنل بوب میننگ نے میڈیا بریفنگ میں بتایا کہ میکسیکو سرحد سے متصل ریاستوں ٹیکساس، کیلیفورنیا اور ایریزوینا میں اب تک4ہزار800فوجی اہلکار تعینات کردیے گئے ہیں،اس کے علاوہ نیشنل گارڈ کے 2ہزار سے ریزرو اہلکار بھی فعال ہیں، مزید نفری بھیج کر مجموعی طور پر 9ہزار اہلکار تعینات کیے جائیں گے ۔دوسری جانب اپوزیشن کی ڈیموکریٹک پارٹی نے آپریشن کو شدید تنقید کا نشانہ بنایا ہے ۔غیر ملکی خبررساں ایجنسی کے مطابق داخلی آپریشن کی ذمے داری نیشنل گارڈزکی ہے جس کی تعیناتی گورنرزکی ذمے داری ہے ، ریگولرفوج کی تعیناتی اس بات کا اشارہ ہے کہ وائٹ ہاؤس بعض گورنروں کی مخالفت سے بچنا چاہتاہے ۔واضح رہے کہ صدرٹرمپ نے کہا تھا سرحد پر 15ہزار فوجی تعینات ہونگے ، جنہیں پتھرمارنے والے مظاہرین پرگولی چلانے کا اختیار ہوگا، تاہم ترجمان پنٹاگن نے وضاحت کی کہ فوجی اہلکاروں کو تارکین وطن یا مظاہرین سے براہ راست آمنا سامنا کرانے کا کوئی منصوبہ نہیں۔

مزید دیکهے

متعلقہ خبریں