الطاف بخاری پارٹی مخالف سرگرمیوں کی پاداش میں پی ڈی پی کی بنیادی رکنیت سے خارج
’’میں جیل سے رہاہوکر ایک بڑے بوجھ سے آزاد ہوا‘‘: بخاری

سرینگر/ کے این ایس /پیپلز ڈیموکریٹک پارٹی ﴿ پی ڈی پی ﴾ نے سینئر لیڈر اور سابق وزیر الطاف احمد بخاری کو پارٹی مخالف سرگرمیاں انجام دینے کی پاداش میں پی ڈی پی نے پارٹی سے خارج کر دیا ہے ۔ پی ڈی پی نے واضح کیا کہ پارٹی مزکورہ لیڈر پر کچھ وقت اسکے پارٹی مخالف سرگرمیوں پر نظر رکھی ہوئی تھی اور آج انہیں پارٹی سے باضابطہ طور خارج کیا گیا ۔ اس دوران پارٹی کے سابق سینئر لیڈر اور/جاری صفحہ نمبر ۱۱پر
 وزیر الطاف احمد بخاری نے بتایا کہ میں جیل سے آزاد ہو کر بوجھ سے آزاد ہوا ۔ انہوں نے بتایا میں پارٹی کے اس فیصلے کا خیر مقدم کرتا ہوں انہوں نے بتایا وہ لوگوں کی خدمت کسی طرح اور کسی انداز میںکرے گا اس فیصلہ بعد میں لیا جائے گا ۔ پی ڈیی پی نے سینئر لیڈر اور سابق وزیر سید الطاف احمد کو پارٹی مخالف سرگرمیاں انجام دینے کی پاداش میں سنیچر کو پارٹی کی بنیادی رکنیت سے خاری کرنے کا اعلان کیا ۔پارٹی نے الطاف بخاری پر الزام عائد کرتے ہوئے بتایا کہ انہوں نے پارٹی کے بانی مرحوم مفتی محمد سعید کے انتقال کے ما بعد پارٹی کو اپنے مفادات کے لئے استعمال کرنا شروع کر دیا۔پارٹی کے مطابق پی ڈی پی نے کی موجودہ خلف شاراور انتشار کی بنیادی وجہ الطاف بخاری کو قرار دیا،جنہوں نے پارٹی کے اندر رہ کر بغاوت کے عنصر کو پروان چڑھا کر اسکی قیادت کی ۔پی ڈی پی کے مطابق الطاف بخاری کے باغیانہ تیور کے نتیجے میںہی سابق مخلوط حکومت کے درمیان طے پا چکے ایجنڈا آف الانس کو شدید نقصان پہنچا ۔ پی ڈی پی نے بتایا بخاری کے باغیانہ تیور کے باوجود پارٹی نے اعتماد کیا اور انہیں پارٹی کے اہم منصب پر فائر رکھا ۔ لیکن بد قسمتی سے مخلوط سرکار کے گرنے کے بعد موصوف نے پارٹی مفادات کے بجائے پارٹی کو توڑ نے میں اہم کردار ادا کیا ۔ پی ڈی پی نے مزید کہا کہ گزشتہ چندہ ماہ کے دوران پی ڈی پی کے اندر ابھر چکے خلف شار کی بنیادی وجہ الطاف بحاری ہی رہے ہیں جس دوران پرنٹ اور الیکڑانک میڈیا میں بھی بخاری کی بغاوت کا چرچا رہا ہے ۔پی ڈی پی کے مطابق پارٹی تاائیں دم اس انتظار میں تھی کہ سید الطاف بخاری ذاتی طور الزامات کی تردید کریں گے۔ مگر بد قسمتی سے انہوں اس طرح کا کوئی اقدام نہیں اٹھا یا۔اس ساری صورت حال کو مد نظر رکھتے ہوئے پی ڈی پی نے سید الطاف بخاری کو پارٹی کی بنیادی رکنیت سے خارج کر نے کا فیصلہ لیا۔خیال رہے الطاف بخاری پی ڈی پی میں کئی محکوں کا وزیر بھی رہ چکا ہے ۔اس دوران سید الطاف احمد بخاری نے ایجنسی کے ساتھ خبر منظر عام پر آنے کے فوراً بعد بات کرتے ہوئے بتایا کہ میں جیل سے رہا ہوکر ایک بڑے بوجھ سے آزاد ہوا ۔انہوں نے بتایا کہ میں پارٹی کے اس اقدام کا خیر مقدم کرتا ہوں ۔ تاہم بخاری نے فوری طور پر اس حوالے سے کسی پارٹی یاسیاست میں رہنے پر کوئی تبصرہ نہیں کیا۔تاہم انہوں واضح کیا کہ میںا س پارٹی سے الگ ہو کر بھی لوگوں کی خدمت کروں گا۔اب یہ دیکھنا کہ میں کسی طرح سے لوگوں کی خد مت کر سکتا ہوں۔

مزید دیکهے

متعلقہ خبریں