ڈاکٹر فاروق نے درگاہ حضرت چستی (رح) پر حاضری دی، کشمیر میں پائیدارامن کیلئے دعا کی

سرینگر/ نیشنل کانفرنس ڈاکٹر فاروق عبداللہ ﴿ ایم پی ﴾ درگاہ حضرت خواجہ محی الدین چستی (رح) واقعہ اجمیر شریف میں حاضری دی اور اس موقعہ پر انہوں نے وہاں نماز بھی ادا کی ۔ ڈاکٹر عبداللہ نے دربار ہذا میں اسلام کی سربلندی ،فتح ونصرف ، عالم انسانیت کی بقا ، کشمیر میں مکمل امن لوٹ آنے کے ساتھ ساتھ ہند پاک دوستی کے لئے دعا کی ۔ انہوں نے کہا یا اللہ کشمیری عوام اس وقت نہایت تباہ کن دور گزر رہی ہے اور ہر لحاظ سے پریشان حال ، اقتصادی بدحالی اور معاشی طور پر دوچار اور عدم تحفظ کے بھی شکار جاری خونینی واقعات باعث پریشانی بنی ہوئی ہے ۔ اللہ ہمیں ان مصائب اور مشکلات سے نجات دیں ۔ ڈاکٹر عبداللہ نے کہا کہ بر صغیر خصوصا ً ہندوستان پاکستان بنگلہ دیشن ، مال دیب ، افغانستان ،/جاری صفحہ نمبر ۱۱پر
 سری لنکا کے کروڈو مسلمان حضرت خواجہ غریب نواز کے طفیل سے مشرف اسلام کی عظیم نعمت سے منور ہوئے اور تا قیامت اس برگزیدہ اور عظیم المرتب اسلامی داعی اور اولیائ کے احسان مند جس طرح ملک کشمیر کے نویں فیصدی مسلمان حضرت بانی اسلام کشمیر میر سید علی ہمدانی (رح) کے احسان مند ہے جنہوں نے ہم کو اسلام کے نور سے منور کیا اور ذریع معاش روزگار ، صنعت و حرفت اور دستکاری بھی دی اورجن کی وارد کشمیر آتے ہی خانقاہ معلی کے جن میں 70 ہزار غیر مسلمان بن گئے بغیر کسی زور وجبر اور تلوار ۔ ڈاکٹر عبداللہ نے امید ظاہر کی اللہ ہندوستان اور پاکستان کے رہنماؤںکو قریب سے قریب آنے کی توفیق عطا کرے اور اپنے حل طلب مسائل افہام و تفہیم کے ساتھ حل کرنے کی صلاحیت عطا کرے ۔ کیونکہ ان کی دوستی سے ہی کشمیر میں پائیہ دار امن لوٹ آسکتا ہے اور اس کے ساتھ ساتھ انہوں نے ملک میں فرقہ پرستی کا قلع قمح کرنے کے لئے ملک کے لوگوں کو متحد ہونا چاہئے ۔

مزید دیکهے

متعلقہ خبریں