کلبھوشن کیس میں پاکستان کی حالت کمزور امور کشمیر گلگت بلتستان کے وفاقی وزیر کااعتراف

اسلام آباد/کرا چی میں گرفتار کئے گئے بھارت کے جاسوس کے کیس کو عالمی عدالت میں لے جانے میں پاکستان حکومت کی ناکامی اور بھارت کی مضبوط لابنگ کااعتراف کرتے ہوئے پاکستانی امور کشمیر گلگت بلتستان کے وفا قی وزیر نے کہا کہ آ نے والے دو دنوں کے دوران کشمیر کمیٹی کاچئر مین نامزد کیاجائیگا تا کہ کشمیریوںکے سا تھ ہو رہی بے انصا فی اور ان کے مسئلے کومضبوط و مستحکم طریقے سے بین الاقوا می سطح پراجاگر کیا جاسکے ۔کشمیر جہاں سیاسی مسئلہ ہے وہی اب انسا نی حقو ق کی پامالیوں کا مسئلہ بھی ہے ۔ پاکستانی کی ایک پرائیویٹ نیوز چینل کے پروگرام میںصحافی سلیم کو انٹر ویو دیتے ہوئے پاکستانی امور کشمیر گلگت بلکستان کے وفاقی وزیر علی امیر گنڈہ پوری نے انکشاف کیا کہ کراچی میں گرفتار کئے گئے بھارت کے جاسوس کلبھوشن یادھو کے کیس کو عالمی عدالت میں لے جانے میں پاکستانی حکومت بری طرح سے ناکام ثابت ہوئی ،انہوںنے . سابق وزیراعظم میاں نواز شریف کو اس کا ذمہ دار ٹھہراتے ہوئے کہا کہ بھارتی جاسوس کے کیس کو عالمی عدالت میںلے جانے کیلئے سابق وزیر اعظم نے اہم رول ادا کیا اور انہیں اپنی شوگر مل کیلئے بھارت سے افرادی اور مالی فائدے حاصل ہورہے تھے ۔انہوںنے کہا کہ بھارت کے جاسوس کو فوجی عدالت نے سزا ئے موت سنائی اور اس پرعمل ہونی چاہئے تا ہم صورتحال اب عجیب وغریب معاملے میں دخل ہوچکی ہے ۔اگر چہ پاکستان کلبھوشن کو کیفر کردار تک پہنچانے کیلئے بھر پور دفاع کریگا تا ہم یہ عالمی عدالت پرمنحصر ہے کہ وہ کیا فیصلہ سنایاگا اور عالمی عدالت کے فیصلے پر پاکستان کوعمل کرنا لازمی ہے ۔

مزید دیکهے

متعلقہ خبریں