میرواعظ کو طلب کرنا جماعت اسلامی پر پابندی

سرینگر// اے پی آئی ñخصوصی تحقیقاتی ادارے کی جانب سے میرواعظ کو پوچھ تاچھ کیلئے دہلی طلب کرنے جماعت اسلامیہ پرپابندی عائدکر دینے کی کاروائی کومداخلت دین قرار دیتے ہوئے انجمن علمائی احناف کے جنرل سیکریٹری نے بیان میںکہا ہے کہ میرواعظ خاندان نے اسلام کی خد مت اور اس کی سربلندی کیلئے خد مات انجام دینے میںکو ئی کسرباقی نہیں چھوڑ دی ہے اور تحقیقاتی ادارے کی جانب سے انہیں دہلی طلب کرنا ناقا بل برداشت ہے ۔ بیان میں انجمن علمائ اہناف کے جنرل سیکریٹری نے خصوصی تحقیقاتی ادارے  این آ ئی اے کی جانب سے حریت ع کے چیئرمین میرواعظ مولوی عمر فاروق کوبے بنیاد کیس میںپو چھ تا چھ کیلئے دہلی طلب کرنے اور جماعت اسلامیہ پرپابندی عا ئدکر دینے کے ساتھ ساتھ مذبی علمای کی گرفتاریاں اور انہیں تنک طلب کرنےکی کاروا ئی کو بلا جواز قرار دیا۔

مزید دیکهے

متعلقہ خبریں