ڈویژنل کمشنر نے سرینگر کو سرسبز اور جاذب نظر بنانے کی پہل کا آغاز کیا

سرینگر/سرینگر کو سرسبزاورجاذب نظر بنانے کی پہل،جس کے تحت ضلع بھر کے سکولوں اوراداروں میں 1.50لاکھ پودے لگائے جائیں گے اوران کے رکھ رکھائو کی طرف بھی مناسب توجہ دی جائے گی کا آج سرکاری طور پر باضابطہ آغاز کیا ہے۔صوبائی کمشنر کشمیر بصیر احمد خان اورترقیاتی/جاری صفحہ نمبر ۱۱پر
 کمشنر سرینگر ڈاکٹر شاہد اقبال چودھری نے ڈی سی آفس سرینگر سے گرین وہیکلز فلیٹ کو ہری جھنڈی دکھاکر روانہ کیا۔ا س موقعہ پر صوبائی کمشنر نے گوریننگ پروجیکٹ کی شروعات کے لئے ترقیاتی کمشنر کو مبارکباد پیش کی۔اس غیر معمولی پہل کا مقصد سرینگر میں حقیقی معنوں میں سمارٹ پلانٹیشن اورپیڑوں کے رکھ رکھائو کو یقینی بنانا ہے تاکہ متوقع نتائج حاصل ہوسکیں۔پروجیکٹ کے تحت شجرکاری مہم پودے مہینے تک مشن موڈ کے تحت جاری رہے گی۔پودے حاصل کرنے کے لئے گرین سرینگر موبائل اپلکیشن کو استعمال میں لایا جاسکتا ہے جس سے پیڑ لگانے کے بعد اُن کی دیکھ بال پر بھی توجہ مبذول کی جائے گی۔اس موقعہ پر ترقیاتی کمشنر نے کہا کہ ضلع بھر میں شجرکاری کے لئے 1.50لاکھ پودے دستیاب رکھے جائیںگے۔ انہوں نے کہا کہ یہ پودے مختلف مقامات پر قائم کئے گئے 7سینٹروں میں دستیاب ہوں گے۔انہوں نے کہا کہ پودوں کو حاصل کرنے کے لئے موبائل اپلیکیشن کا استعمال کیاجاسکتا ہے جس کا آغازکیاجاچکا ہے۔میٹنگ میں بتایا گیا کہ ضلع کے 100مختلف سکولوں میں20ہزا رپودے لگائے جائیں گے اورہر سکول میں 200پودے لگاکر ان سکول کو جاذب نظر بنایاجائے گا۔20سے30طلاب پر مشتمل رضاکار سکولوں میں شجرکاری کریں گے۔متعلقہ تحصیلدار شجرکاری اورپیڑوں کے رکھ رکھائو کی نگرانی کریں گے۔میٹنگ سے خطاب کے دوران ترقیاتی کمشنر نے کہا پروجیکٹ کی شروعات کا مقصد سرینگر کو سرسبز اورجاذب نظر بنانا ہے۔

مزید دیکهے

متعلقہ خبریں