گاندربل میں بھی لڑکی کی مبینہ عصمت ریزی کا معاملہ منکشف - پولیس کی بروقت کارروائی ، ملزم گرفتار

گاندربل /کے این ایس/شمالی کشمیر کے سمبل علاقے میں پیش آئے سانحہ کے زخم ابھی مندمل نہیں ہوپائے تھے کہ وسطی کشمیر کے کنگن علاقے میں اسی نوعیت کے ایک اور معاملے کا انکشاف ہوا ہے جس میں ایک نوجوان نے 16سالہ لڑکی کی عصمت تار تار کی ہے۔ اس سلسلے میں پولیس نے شکایت موصول ہونے کےساتھ ہی ملزم کو گرفتار کرتے ہوئے واقعے کی مزید چھان بین شروع کردی ہے۔ادھر ایس ایس پی گاندربل نے واقعے کی تصدیق کرتے ہوے بتایا کہ پولیس کو لڑکی کی عصمت ریزی کی شکایت اتوار کو ملی جس کے بعد متاثرہ لڑکی کے ہمسایہ کو گرفتار کر لیا گیا۔ انہوں نے کہا کہ پولیس نے معاملے سے متعلق کیس درج کرتے ہوئے مزید تحقیقات کا آغاز کردیا ہے۔ شمالی کشمیر کے سمبل علاقے میں پیش آئے سانحہ کیخلاف ابھی پوری وادی میں شدید غم و غصے ہی جاری ہے وہی اسی بیچ وسطی کشمیر کے ضلع گاندربل کے دور افتادہ گائوں ہرن میں اسی طرح کا ایک اور شرمناک واقعہ پیش آیا ہے جس میں ایک نوجوانے اپنی 16سالہ لڑکی کی عصمت ریزی کی ہے اس دوران افراد خانہ کی جانب سے پولیس میں شکایت ملنے کے بعدفوریکاروائی کر کے ملزم کی گرفتاری عمل میں لائی ہے ۔پولیس ذرائع نے کہا کہ لڑکی کے گھروالوں نے اس سلسلے میں شکایت درج کرائی جس کے بعد ملزم کی گرفتاری عمل میں لائی گئی۔گاندربل کے ایس ایس پی محمد خلیل پوسوال کے مطابق انہیں لڑکی کی عصمت دری کی شکایت اتوار کو ملی جس کے بعد ہرن نامی گائوں کے رہنے والے ملزم کو گرفتار کیا گیا جو کہ متاثرہ لڑکی کا ہمسایہ ہے۔پولیس نے اس سلسلے میں ملزم کو گرفتار کر کےایک کیس درج کرکے مذید تحقیقات شروع کی ہے ۔ خیال رہے ابھی اہل وادی میںشمالی کشمیر کے سمبل علاقے میںپیش آئے سانحہ کے خلاف ابھی لوگوں میں غم و غصہ پایا ہی جا رہا ہے۔
 تو دوسری طرف وسطی ضلع گاندر بل میں اسی طر ح کے ایک واقعے نے اہل وادی کا سر شرم سے جکا دیا ہے واضح رہے کہ وادی بھر میں سمبل میں ایک تین سالہ معصوم بچی کی مبینہ عصمت ریزی کیخلاف شدید احتجاج کا سلسلہ جاری ہے جس سلسلے میں انتظامیہ نے عوامی غم و غصہ دیکھ کر وادی کے بیشتر اضلاع میں ہائر سکنڈری سکول اور کالجو کو ایک دن کے لئے بند رکھنے کا اعلان کیا۔

مزید دیکهے

متعلقہ خبریں