کشمیر کی سڑکوںکو فی الفور قابل آمد رفت بنایا جائے دشمن عناصر سے ہوشیار رہنے کی اپیل :نیشنل کانفرنس

سرینگر //جنوبی کشمیر کے رکن پارلیمان â این سی کے لیڈرá اور ماہر قانون دان جسٹس حسنین مسعود â ریٹائرá اور شمالی کشمیر کے رکن پارلیمان سابق اسمبلی سپیکر و سابق اعلیٰ تعلیم کے وزیر ایڈوکیٹ محمد اکبر لون نے گورنر انتظامیہ سے اپیل اور تاکید کی کہ وہ خستہ حال سڑکوں جو کھنڈرات اور گہرے کھڈوںمیں تبدیل ہوئی ہے کو فلفور آمد رفت کے لئے قابل بنایا جائیں کیونکہ مسافروں کوسفر کرنے میںزبردست مشکلات لگ جاتا ہے اور منٹوں کا سفر گنٹوں میں کرنا پڑتا ہے اس کے ساتھ ساتھ بھی گاڑیوں کو بھی زبردست نقصانات اُٹھانا پڑتا ہے ان باتوں کا اظہار ان رکن پارلیمان نے اپنے اپنے علاقوں کے عوامی وفود ، پارٹی عہدیداروں اور کارکنوں سے خطاب کرتے ہوئے کیا ۔ انہوں نے کہا کہ جون بھی اب گزرنے والا ہے لیکن ابھی تک گورنر انتظامیہ سڑکوں کی تجدید و تعمیراورمرمت کرنے میں عدم دلچسپی دے رہی ہے اس کے ساتھ لوگوں کے بہت سارے مشکلات ، بصورت پینے کی پانی ، بجلی کی عدم دستیابی ، ایشائ خوردنی وغیرہ شامل ہے ۔ لوگوںنے رکن پارلیمان اور لیڈروں کو اپنے اپنے علاقے کے لوگوں کے درپیش مشکلات اور مصائب سے بھی آگاہ کیااور دونوں رہنمائوں نے عوام کی حکومت کے تہیں ان شکایات کو سن کر آن سپارٹ ہی ان کا سد باب کرنے کے لئے متعلقہ اعلیٰ حکام کو آگاہ کیا ۔ لیڈران نے کہا کہ آپ نے ہمیں اپنا قیمتی ووٹ دے کر کامیاب بنایا اور ہم پر یہ اخلاقی فرض کہ ہم لوگوںکی خدمت کریں ۔

مزید دیکهے

متعلقہ خبریں