بزرگوں کے حقوق کا عالمی دن، مقررین نے بزرگوں کے حقوق اور وقار کو تحفظ دینے پر زور دیا، ڈی ایل ایس اے سرینگر نے تعلیم دانوں کےلئے اورنٹیشن پروگرام کا انعقاد کیا

سرینگر/بُزرگوں کے حقوق سے متعلق عالمی دِن کے موقعہ پر تعلیم دانوں کے لئے ایک اورنٹیشن پروگرام کا انعقاد کیا گیا۔ پروگرام میںمقررین نے بُزرگوں کے مسائل کو حل کرنے اور اُن کے حقوق و وقار کو تحفظ دینے کی ضرورت کو اُجاگر کیا۔یہ اورنٹیشن پروگرام’’ ایجنگ وِد ڈگنٹی‘‘ موضوع کے تحت شروع کی گئی ایک ہفتہ طویل مہم کا حصہ ہے ۔ اس پروگرام کا انعقاد ڈی ایل ایس اے کی طرف سے گرلز ہائیر سکینڈری سکول کوٹھی باغ میں کیا گیا۔اس موقعہ پر پرنسپل ڈسٹرکٹ اینڈ سیشنز جج سرینگر عبدالرشید ملک نے کہا کہ اس اورنٹیشن پروگرام کا بنیادی مقصد یہ ہے کہ معزز شہریوں کو درپیش مختلف چیلنجوں کو حل کیا جاسکے اور طُلاب و تعلیم دانوں کو معزز شہریوں کی ضروریات سے آگاہ کیا جاسکے۔علاوہ ازیں انہیں سنیئر سٹیزن ایکٹ کے بارے میں جانکاری دی جاسکے۔انہوں نے کہا کہ اس طرح کے پروگرام نوجوانوں اور معزز شہریوں کے درمیان موجود دوریوں کو کم کرنے میں سود مند ثابت ہوں گے۔ممبر سیکرٹری جے اینڈ کے سٹیٹ لیگل سروسز اتھارٹی محمد اکرم چوہدری نے کہا کہ ایک ہفتہ طویل بیداری پروگرام کا انعقاد ریاستی ہائی کورٹ کی چیف جسٹس جسٹس گیتا متل کی ہدایات پر کیا گیا تا کہ لوگوں کو معزز شہریوں کی مشکلات سے آگاہ کیا جاسکے اور اُن کے وقار میں اضافہ کیا جاسکے۔انہوں نے کہا کہ اس طرح کے پروگرام معزز شہریوں کو اُن کے حقوق کے بارے میں جانکاری دینے میں بھی مدد گار ثابت ہوتے ہیں اور اس طرح وہ با عزت زندگی گذارنے میں بھی کامیاب ہوتے ہیں۔ڈاکٹر آبھا چودھری جنہوں نے ریسورس پرسن کی حیثیت سے پروگرام میں شرکت کی اور جو انوگراہا نئی دہلی کی چیئرپرسن بھی ہیں،نے بُزرگ شہریوں کے حقوق کے مختلف پہلوؤں پر روشنی ڈالی اور کہا کہ نوجوانوں میں اس تعلق سے زیادہ سے زیادہ بیداری پیدا کیا جانی چاہئے۔    پروگرام کا افتتاح سیکرٹری ڈی ایل ایس اے سرینگر عدنان سعید نے کیا۔ انہوں نے افسروں پر زور دیا کہ وہ عمر رسیدہ والدین اور معزز شہریوں کی بہبودی کے لئے شروع کی گئی سکیمیں اور قوانین پر سختی سے عمل پیرا رہیں۔جوڈیشل افسروں، مختلف سکولوں کے سربراہوں، تعلیم دانوں، انتظامی افسروں اور دیگر متعلقین نے بھی اس پروگرام میں شرکت کی۔بعدمیں ایک رنگا رنگ ثقافتی پروگرام بھی منعقد کیا گیا۔ علاقہ ازیں مصوری کے مقابلے میں جیتنے والے طُلاب میں انعامات بھی تقسیم کئے گئے۔

مزید دیکهے

متعلقہ خبریں