’وندے ماترم ‘اور ’بھارت ماتا کی جئے‘ کے نعروں کے جواب میں، اسد اویسی نے حلف لینے کے بعد پارلیمنٹ میں ’تکبیر، اللہ اکبر‘ کا نعرہ لگایا

 حیدرآباد، 18 جون یواین آئی  لوک سبھا میں حیدرآباد کی نمائندگی کرنے والے بیرسٹر اسدالدین اویسی صدر کل ہند مجلس اتحاد المسلمین نے آج رکن پارلیمنٹ کی حیثیت سے حلف لیا۔بیرسٹر اویسی نے اردو میں خدا کے نام پر حلف لیا۔انھوں نے حلف لینے کے بعدجئے بھیم جئے میم،تکبیر، اللہ اکبر اور جئے ہند کا نعرہ لگایا۔حلف لینے کے لئے جب وہ جارہے تھے تو اسی وقت بی جے پی کے ارکان پارلیمنٹ ایوان میں وندے ماترم اور بھارت ماتا کی جئے کے نعرے لگا رہے تھے ۔اس کے جواب میں انہوں نے اپنے دونوں ہاتھوں کو اٹھا کر زور سے نعرے بازی کرنے کا اشارہ کیا۔ لوک سبھا میں آج دوسرے دن تلنگانہ سے تعلق رکھنے والے ارکان پارلیمنٹ نے حلف لیا۔اس نعرہ بازی پر اپنا رد عمل ظاہر کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ یہ اچھی بات ہے ، کم سے کم مجھے دیکھ کر انھیں رام کی یاد تو آئی۔ ساتھ ہی اسدالدین اویسی نے یہ بھی کہا کہ امید ہے کہ بی جے پی والوں کو آئین اور مظفر پور میں بچوں کی موت بھی یاد رہے گی۔

مزید دیکهے

متعلقہ خبریں