پلوامہ میں پر اسرار دھماکہ، 28 سالہ نوجوان زخمی، راجوری میں کنٹرول لائن پر ہند ووپاک افواج کے درمیان آگ و آہن کا تبادلہ

سرینگر/ کے این ایس / زاسو پلوامہ میں ایک پر اسرار دھماکے کے نتیجے میں ایک 28سالہ نوجوان بری طرح زخمی ہوا ہے جس کے بعد  زخمی نوجوان کو ابتدائی علاج معالجے کے لئے ضلع اسپتال منتقل کیا گیا ، جہاں سے اسے معیاری علاج کےلئے سرینگر روانہ کیا گیا ہے ۔پولیس نے واقعے کے حوالے سے ایک کیس درج کر کے تحقیقات شروع کی ہے ۔ادھر راجوری میں کنٹرول لائن کے نزدیک ہندوپاک افواج کے مابین آگ و آہن کا شدیدتبادلہ ہوا جس کے نتیجے میں علاقے میں خوف و دہشت کا ماحول پیدا ہوا۔ جنوبی کشمیر کے ضلع پلوامہ کے زاسو نامی گائوں میں جمعہ کے روز بعد دوپہر کوڑے کے ڈھیر میں ایک پر اسرار دھماکہ ہوا جس کے نتیجے میں ایک 28سالہ نوجوان جاوید احمد ڈارولد محمد عبد اللہ ڈار ساکنہ زاسوبری طرح زخمی ہوا ۔ذرائع نے بتایا زخمی نوجوان ایک کباڑی ہے اور دھماکہ اْس وقت ہوا جب وہ کباڑے کے ساتھ ہی کام /جاری صفحہ نمبر ۱۱پر
مصروف عمل جس دوران یہاں دھماکہ ہوا۔تاہم پولیس ذرائع نے بتایا کہ وہ علاقے میں ہوئے پر اسرار دھماکے کے حوالے سے تحقیقات کر رہی ہے ۔ادھر زخمی نواجون کو فوری طور پلوامہ اسپتال منتقل کیا گیا ہے جہاں سے انہیں سرینگر منتقل گیا ہے ۔پولیس نے واقعے کے حوالے سے کیس درج کر کے تحقیقات شروع کی ہے ۔ادھر صوبہ جموں کے راجوری علاقے میں جمعہ کے صبح ضلع راجوری میں بھی کنٹرول لائن پر ہند۔پاک افواج کے مابین گولیوں کا تبادلہ ہوا ہے ۔جس نتیجے میں علاقے میں یہاں زبردست خوف و دہشت کا ماحول پیدا ہوا ۔دفاعی  ذرائع کے مطابق بھارت اور پاکستانی افواج نے جمعہ صبح نوشیرا سیکٹر کے بابا کھوری علاقے میں ایک دوسرے کی اگلی چوکیوں کو نشانہ بناتے  ہوئے ہلکے اور درمیانہ ہتھیاروں کا استعمال کر کے شدید گولہ باری کی ہے اس دوران علاقہ گولہ بارود کی گن گرج سے لرز اٹھاجس دوران یہاں شدید خوف و دہشت کا ماحول پیدا ہوا تاہم دونوں اطراف سے کسی جانی نقصان کی کوئی اطلاع موصول نہیںہو ئی ہے۔

مزید دیکهے

متعلقہ خبریں