کوروناوائرس سے بچائو کےلئے احتیاطی تدابیرڈویژنل کمشنر نے اقدامات کاجائزہ لیا،لوگوں سے خوفزدہ نہ ہونے کی اپیل

سرینگر/ ڈویژنل کمشنر کشمیر کا عہدہ سنبھالنے کے بعد پی کے پولے نے آج کووڈ۔19کے خطرات کی روک تھام کے لئے اعلیٰ سطح کی تین میٹنگوں کی صدارت کی۔انہوںنے وادی کے تمام ترقیاتی کمشنروں سے وائرس کے پھیلائو کی روک کے لئے کئے جارہے اقدامات کے بارے میں جانکاری حاصل کی۔اس موقعہ پر صوبائی کمشنر کو آئسولیشن وارڈوں،کورنٹائین بیڈس،ٹیسٹنگ لیبارٹریوں، دن رات کا م کرنے والے کنٹرول رومز،وی ٹی ایم کِٹس کی دستیابی،ماسکس اور ہسپتالوں میں دستیاب سہولیات کے بارے میں جانکاری دی گئی۔میٹنگ میں بتایاگیا کہ عنقریب ہی 5000کِٹس تقسیم کئے جائیں گے۔صوبائی کمشنر نے- مختلف محکموں کے درمیان بہتر تال میل کویقینی بنانے اوراحتیاطی تدابیر کو مزید مستحکم کرنے کے لئے ایس اوپیز کو تشکیل عمل میںلائی۔سکمز صورہ میں ضلع گاندربل اوربانڈی پورہ کے مشتبہ مریضوں کی ٹیسٹنگ کی جائے گی،جب کہ ایس ایم ایچ ایس اورسی ڈی ہسپتالوں میں سرینگر اوربڈگام کے باشندوں کی جانچ ہوگی۔بارہمولہ اورکپوارہ کے لئے ٹیسٹنگ سہولیات بارہمولہ ضلع ہسپتال میںد ستیاب رہیں گی۔اننت ناگ ضلع ہسپتال میں اننت ناگ اورکولگام کے لئے اورپلوامہ ضلع ہسپتال میں پلوامہ اور شوپیان کے مشتبہ مریضوں کے لئے ٹیسٹنگ سہولیات دستیاب رکھنے کافیصلہ کیا گیا۔ہسپتالوں میں امکانی دبائو کو کم کرنے کے لئے تمام طبی مشورے رات دن کام کرنے والے کال سینٹرس میں دستیاب ہوں گی جہاں ماہر ڈاکٹر مریضوں کو لازمی مشورے دیں گے۔ایسے لوگوں کے لئے 14روزہ کورنٹائین لازمی ہوگا جو کہ حالیہ دنوں میں غیر ملکی سفر کرچکے ہیں،لیہہ اورکرگل سے آنے والے مسافروں کےلئے بھی ان ہدایات پر عمل آوری لازمی ہے۔ہسپتالوں اور دیگر جگہوں پر قائم کورنٹائین وارڈوں میں ماہر ڈاکٹروں کے علاوہ تمام لازمی سہولیات دستیاب ہوں گی۔وائرسے متاثرہ مریضوں کے لئے ایمبولینس،عملے ،ٹیسٹنگ اورعلاج کی سہولیت کے لئے بھی اقدامات کئے جارہے ہیںپولیس آفیسران متاثرہ مریضوں کے ساتھ دوستانہ ماحول میں رابطہ قائم کرکے اُن کی ٹیسٹاورکورنٹائین کے لئے پہل کریں گے۔صوبائی کمشنر نے لوگوں سے اپیل کی ہے کہ وہ وائرس کے خطرات سے خوفزدہ نہ ہوںبلکہ احتیاطی تدابیر سے کام لیں کیونکہ احتیاط سے ہی اس مہلک مرض پر قابو پایا جاسکتا ہے۔میٹنگ میں ترقیاتی کمشنر سرینگر،ایم ڈی این ایچ ایم اینڈ انچارج سی سی ای،ایڈیشنل کمشنر،ڈائریکٹر ہیلتھ سروسز،سکمز اور جی ایم سی ہسپتالو ں کے سینئر آفیسران اور اسسٹنٹ کمشنر سینٹرل کے علاوہ دیگر متعلقہ آفیسران بھی موجود تھے۔

مزید دیکهے

متعلقہ خبریں