ڈاکٹروں کی ٹیموں نے متاثرہ خاتون کے گھر اور آس پاس کے علاقوں میں لوگوں کی تشخیص کی جس طیارے میں اس نے سفر کیا اُسکے مسافروں کو بھی کورنٹائین میں رکھاگیا :ڈائریکٹر ہیلتھ

جے کے این ایس / یو پی آئی : سرینگر/شہر خاص کے خانیار علاقے سے تعلق رکھنے والی ایک خاتون کا کرئونا وائرس میں ٹیسٹ مثبت آنے کے بعد انتظامیہ نے انکی رہائش گاہ کے300میٹر گرد نواح کی نگرانی کی جبکہ20ٹیموں کو تشکیل دیا گیا،جنہوں نے جمعرات کو علاقے میں گھر گھر جاکر مکینوں سے پوچھ تاچھ اور تشخٰص کی۔اس دوران علاقے کے مکینوں میں سخت خوف و ہراس اور تشویش صاف نظر آرہی تھی۔ انتظامیہ نے بدھ شام کو اس بات کی تصدیق کی کہ شہر کے خانیار علاقے سے تعلق رکھنے والے ایک خاتون،جو کہ حال ہی میں سعودی عرب سے عمرہ کے بعد لوٹی تھی کا کرئونا وائرس میں مبتلا ہونے کا ٹیسٹ مثبت آیا ہے۔ذرائع کا کہنا ہے کہ اس خبر کے بعد ہی انتظامیہ نے بدھ شام کو علاقے کی نگرانی شروع کی،اور کسی بھی مکین کو علاقے سے باہر نہ جانے کی صلاح دی۔ذرائع نے بتایا کہ اس سلسلے میں راست دیر گئے تک صوبائی کمشنر کے دفتر میں میٹنگ بھی ہوئی،جس کے بعد محکمہ صحت کی کئی ایک ٹیموں کو علاقے کی نگرانی اور مکینوں کی تشخٰص کیلئے قائم کیا گیا۔ ان ذرائع نے بتایا کہ جمعرات صبح کو محکمہ صحت کی قریب20ٹیمیں علاقے میں پہنچی اور انہوں نے کرئونا وائرس کے حوالے سے ٹیسٹ میںمثبت پائی گئی خاتون کی رہائش گاہ کے گرد نواح قریب300میٹر کے دائرے میں مکینوں سے صحت کے بارے میں پوچھ تاچھ کی اور ان کو طبی مشورے بھی دئیے گئے۔ذرائع نے بتایا کہ منہ پر جدید ماسکیں پہنے اور اپرن میں ملبوس محکمہ صحت کی ان ٹیموں نے مکینوں سے پوچھ تاچھ بھی کی اور انہیں احتیاط برتنے کا مشورہ دیا۔ ذرائع نے بتایا کہ محکمہ صحت کی ٹیموں نے ان شہریوں سے مذکورہ خواتین کے ساتھ گزشتہ3روز سے روابط کے بارے میں جانکاری حاصل کی۔ اس ٹیم میں موجود ایک خاتون ڈاکٹر نے جے کے این ایس کو بتایا کہ قریب20ٹیمیں محکمہ صحت نے تشکیل دی تھی،جنہوں نے گھر گھر جاکر شہریوں کی تشخیص کی،جبکہ بالخصوص کسی بیماری یا مرض میں مبتلا شخص کی جانچ بھی کی۔ان کا کہنا تھا کہ انہوں نے ان شہریوں کو احتیاط بھرتنے اور بلا ضرورت باہرنہ جانے کا بھی مشورہ دیا۔ادھرڈائریکٹر نے بتایا کہ متاثرہ خاتون نے جس طیارے میں سفر کیا اُس میں سوار سبھی مسافروں کی تفصیلات حاصل کی جارہی ہیں ۔ انہوںنے کہاکہ سبھی مسافروں کا کورنا وائرس ٹیسٹ ہوگا ۔منور آباد خانیار علاقے ایک خاتون کا کورنا وائرس ٹیسٹ مثبت آنے کے بعد ڈاکٹروں کی ایک اعلیٰ سطحی ٹیم نے علاقے کا دورہ کیا۔ نمائندے کے مطابق جمعرات کے روز 20ڈاکٹروں کی ٹیم نے علاقے کا دورہ کیا اور وہاں پر گھر گھر جا کر مکینوں سے اس خاتون کے رابطوں کے بارے میں آگاہی حاصل کی۔ معلوم ہوا ہے کہ چار گھنٹے تک ڈاکٹروں کی ٹیم نے علاقے میں متاثرہ خاتون اور اُس کے ساتھ ملاقات کرنے والوں کے بارے جانکاری حاصل کی تاکہ ایسے افراد کو آئسولیشن منتقل کیا جاسکے۔ ڈائریکٹر موصوف کا مزید کہنا تھا کہ ایسا کرنا ناگزیر بن گیا ہے کیونکہ کورنا وائرس ایک عالم گیر وبا ہے اس کی روکتھام کی خاطر متاثرہ خاتون کے رابطوں کی نشاندہی کرکے اُنہیں آئسولین منتقل کرنا ناگزیر بن گیا ہے۔ ڈائریکٹر موصوف نے بتایا کہ متاثرہ خاتون کے ساتھ طیارے میں جتنے افراد سوار تھے اُن کا بھی کورنا وائرس ٹیسٹ کیا جائے گا۔ انہوںنے کہاکہ طیارے میں سوار سبھی افراد کی تفصیلات ائر پورٹ اتھارٹی سے حاصل کی جارہی ہیں اور اُنہیں اسپتال طلب کرکے ٹیسٹ کیا جائے گا۔ انہوںنے کہاکہ ہم نے اس سلسلے میں اقدامات اُٹھانا شروع کئے ہیں اور ائر پورٹ اتھارٹی کی جانب سے بھی ان مسافروں کی تفصیلات فراہم کی جارہی ہیں۔ ڈائریکٹر کا مزید کہنا تھا کہ متاثرہ خاتون کے سبھی رابطوں کے بارے میں تفصیلات حاصل کی جارہی ہیں۔ نمائندے نے بتایا کہ ڈاکٹروں کی ٹیم نے خیام ، بشمبر نگر ، خانیار اور منور آباد علاقوں میں گھر گھر جا کر لوگوں سے تفصیلات حاصل کی اور مکینوں پر زور دیا گیا کہ اگر انہوںن ے متاثرہ خاتون کے ساتھ ہاتھ ملائے ہیں تو اُس صورت میں اُنہیں فوری طورپر بھرتی ہونے کی ضرورت ہے۔

مزید دیکهے

متعلقہ خبریں