کشمیر میں کسی طرح کی پابندیاں عائد نہیں کی جارہی ہیں وزارت داخلہ کی وضاحت، بعض عناصر بلاوجہ عوام کو پریشان کررہے ہیں

سرینگر/ اے پی آئی جموں کشمیر میں بالعموم اور وادی کشمیرمیں بالخصوص ا نٹرنیٹ سے زیادہ افواہیں تیز وزیرداخلہ کے حوالے سے افواہ اڑائی گئی کہ جموں وکشمیرمیں انٹرنیٹ موبائل سروس لینڈ لائن مواصلاتی نظام کوپھرمعطل کیاجارہاہے تاہم وزارت داخلہ نے افواہوں کی سختی کے ساتھ تردید کرتے ہوئے کہاکہ وزارت داخلہ کے پاس ایساکوئی منصوبہ نہیں ہے کئی عناصرجموں وکشمیرکے حوالے سے افواہیں اڑاتے ہیں تاکہ امن امان کودرہم برہم کرکے لوگوں کوفکروتشویش میں مبتلاکیاجائے ایسے عناصرکے بیخ کنی کیلے سختی کے ساتھ اقدامات اٹھائے جائےنگے جوکوئی بھی ہوگا کیفر کردار تک پہنچایاجائےگا ۔ جموں وکشمیرمیں بالعموم اور وادی کشمیرکے لوگوں میں اس وقت افواہ پھیل گئی کہ وزیرداخلہ امیت شاہ نے ٹویٹ کے ذریعے جموں وکشمیرمیںانٹرنیٹ موبائل لینڈ لائن سہولیات کومعطل کرنے کے احکامات صاد رکئے اور اس افواہ کولیکروزیرداخلہ کی جا نب سے ٹویٹ کے ذریعے متعلقہ محکمہ کوآگاہ کرے گی افواہ دوڑائی گئی اس سے پہلے جموں کشمیرمیں فور جی انٹرنیٹ بحال کرنے کی بھی افواہ اڑائی گئی جو صحیح ثابت نہیں ہوئی جموں کشمیرمیں انٹر نیٹ موبائل لینڈ لائن سروس کو معطل کرنے کی افواہ نے دہلی میں وزارت داخلہ کوبھی پریشانیوں میں مبتلاکردیااور وزارت داخلہ کی جانب سے افواہ کی باضابطہ طور پرتردید کردی گئی ۔ کئی عناصر جموں کشمیرمیں جان بوجھ کرایسی افواہیں دوڑائی جاتی ہے جس سے لوگوںکوفکروتشویش میںمبتلاکیاجائے ۔وزارت داخلہ کی جانب سے کشمیرمیں انٹرنیٹ موبائل مواصلاتی نظام معطل کرنے کا کوئی منصوبہ نہیں ہے۔

مزید دیکهے

متعلقہ خبریں