عید الاضحی ،15اگست ،رکھشا بندھن تہوار ڈی جی پولیس کی سربراہی میں اعلیٰ سطحی سکیورٹی جائزہ میٹنگ فورسز کو چوکس رہنے کی ہدایت

کے این ایس : سرینگر/عید الاضحی ،15اگست اور رکھشا بندھن کے پیش نظر پولیس ہیڈ کوارٹر (پی ایچ کیو) سری نگر میں جمعرات کو ایک اعلیٰ سطحی جائزہ میٹنگ منعقد ہوئی ،جس میں سیکیورٹی کے سبھی امور پر تباد لہ خیال کیا ۔ڈائریکٹر جنرل آف پولیس نے اگلے15دن انتہائی اہم قرار دیتے ہوئے پولیس وفورسز کے افسران کو ہدایت دی کہ وہ اہم تنصیبات اور حساس مقامات پر سیکیورٹی کے مؤثر اقدامات کریں جبکہ سیکیورٹی فورسز کو مزید چوکس کیا جائے ۔پولیس ہیڈ کوارٹر (پی ایچ کیو) سری نگر میں جمعرات کو ایک اعلیٰ سطحی سیکیورٹی جائزہ میٹنگ منعقد ہوئی ،جس کی صدارت ڈائریکٹر جنرل پولیس دلباغ سنگھ نے کی ۔سیکیورٹی جائزہ میٹنگ میں جموں وکشمیر کی مجموعی صورتحال، خاص طور پر عید اور 15اگست (یوم آزادی) کے حوالے سے سیکیورٹی انتظامات پر تبادلہ خیال کیا گیا ۔اس میٹنگ میں عالمگیر وبا کووڈ۔19کے خلاف لڑائی کے امور بھی زیر بحث آئے ۔اس میٹنگ میں اے ڈی جی پی (سی آئی ڈی)، آر آر سوائن ، اے ڈی جی پی (کارڈ) ایس جے ایم گیلانی ، اے ڈی جی پی لا اینڈ آرڈر / ہیڈ کوارٹر (پی ایچ کیو) ،اے جی میر ، ڈویڑنل کمشنر کشمیر پی کے پول ، آئی جی پی سی آر پی ایف (اوپریشن) راجیس کمار ، آئی جی پی کشمیر وجئے کمار ، آئی جی پی سی آر پی ایف پی کے پانڈے ، ڈی آئی جی بی ایس ایف بی کے جھا ، ڈی آئی جی ایس ایس بی رنجیت سنگھ ، ڈی آئی جی سی آر پی ایف ڈی ایس مان ، آئی وائی سی (اوپریشن) آئی ٹی بی پی این ایس بھنڈھاری اور پولیس ہیڈ کوارٹرز کے افسران نے شرکت کی ۔آئی جی پی جموں شری مکیش سنگھ ، تمام رینج ڈی آئی جی اور جے اینڈ کے کے تمام ضلعی ایس ایس پی نے اپنی پوسٹنگ کی جگہوں سے ویڈیو کانفرنس کے ذریعے میٹنگ میں شرکت کی۔اپنے خطاب میں ڈی جی پی دلباغ سنگھ نے ہدایت کی کہ آئندہ پندرہ روز تک فورسز کو بہت چوکس رہنا ہے اور انہیں اپنے تمام وسائل بروئے کار لانے ہوں گے تاکہ مذہبی تہواروں کے ساتھ ساتھ یوم آزادی کی تقریبات پرامن طریقے سے منعقد ہو۔ڈی جی پی نے کہا کہ اس عرصے کے دوران ملک دشمن اور معاشرتی عناصر کی طرف سے اشتعال انگیزی ہوسکتی ہے اور اس طرح کہ تمام نفری جو ناکوں ، آپریشنوں ،اسٹیٹک محافظوں اور دیگر تعیناتیوں کو مستقل بنیادوں پرجانکاری دینے کی ضرورت ہے ۔ انہوں نے افسران کی تعریف کرتے ہوئے کہا کہ پچھلے کچھ مہینوں کے دوران آپریشنوں کے ساتھ ساتھ لاءاینڈ آرڈر کے محاذ پر بھی بہت سارے اچھے کام ہوئے ہیں ۔ڈی جی پی نے کہا کہ سیکیورٹی مزید مضبوط بنانے کے لئے مؤثر اور ٹھوس اقدامات کرنے کی ضرورت ہے جبکہ اہم تنصیبات اور اہم مقامات پر سیکیورٹی مزید متحرک کرنے کی بھی ضرورت ہے ۔ انہوں نے کہا کہ افسران مقامی ضروریات ، ضوابط وغیرہ کو مدنظر رکھتے ہوئے فیصلے کرسکتے ہیں۔ ڈی جی پی نے یہ بھی کہا کہ سی سی ٹی وی سے لیس بی پی بنکر جیسی سہولیات مہیا کی گئی ہیں اور انہوں نے افسران کو مشورہ دیا کہ ان وسائل کا بہتر استعمال کرنا چاہئے۔ انہوں نے کہا کہ حساس اور امن و امان کی نوعیت کے واقعات کو ریکارڈ کیا جانا چاہئے اور بعد میں ان جائزہ لیاجانا چاہئے۔انہوں نے مزید مشورہ دیا کہ مذہبی جشن اور قومی تہواروں کے دوران مناسب احتیاطی تدابیر اورکووڈ۔19 پروٹوکول پر عمل در آمد کو بھی یقینی بنایا جانا چاہئے۔میٹنگ میں شریک تمام افسران نے ڈی جی پی کو اپنے اپنے علاقوں میں موجودہ صورتحال کے بارے میں آگاہ کیا ۔

مزید دیکهے

متعلقہ خبریں