امشی پورہ مبینہ جھڑپ کی کورٹ آف انکوائری شروع

فوج کیلئے کام کرنے والے 3 افراد نے اپنے بیانات فوجی عدالت میں قلمبند کروائے

یو پی آئی : سرینگر/امشی پورہ شوپیاں میں ہوئی مبینہ فرضی جھڑپ کے حوالے سے کورٹ آف انکوائری شروع ہو گئی ہے۔ معلوم ہوا ہے کہ فوج کیلئے کام کرنے کیلئے تین افراد نے فوجی عدالت میں اپنے بیانات قلمبند کروائے۔ امشی پورہ شوپیاں میں 18جولائی کو امشی پورہ شوپیاں میں مبینہ فرضی تصادم کے حوالے سے فوج نے تحقیقات کا آغاز کیا ہے۔ ذرائع نے بتایا کہ باور کیا جارہا ہے کہ فوج کیلئے کام کرنے والے تین افراد نے سنیچر کے روز فوجی عدالت میں اپنے بیانات قلمبند کئے ہیں۔ ذرائع نے بتایا کہ مذکورہ تین افراد کا اس جھڑپ کے ساتھ کیا وابستگی ہے اس بارے میں بھی تحقیقات ہو رہی ہیں۔ نئی دہلی سے شائع ہونے والے ایک انگریزی روز نامہ نے ذرائع کا حوالہ دیتے ہوئے لکھا ہے کہ ابتدائی تحقیقات کے دوران اس بات کے اشارے مل رہے ہیں کہ تینوں کا اس جھڑپ کے ساتھ واسط ہے۔ بتادیں کہ آئی جی کشمیر وجے کمار نے پر یس کانفرنس کے دوران بتایا تھا کہ مبینہ فرضی جھڑپ میں جاں بحق کئے گئے تین نوجوانوں کا ڈی این اے ٹیسٹ لواحقین کے ساتھ میچ ہوا ہے ۔ آئی جی نے یہ بھی بتایا کہ اس سلسلے میں بڑے پیمانے پر تحقیقات شروع کی گئی ہے۔

مزید دیکهے

متعلقہ خبریں