اونتی پورہ میں لشکر طیبہ جنگجو ؤں کی کمین گاہ تباہ زیر زمین2 کمروں اور بیت الخلاءسے ہتھیار و گولی بارود برآمد:پولیس

کے این ایس �اے پی آئی : سرینگر/پولیس نے بتایا کہ فوج وفورسز کیساتھ اونتی پورہ میں ایک مشترکہ جنگجو مخالف کارروائی کے دوران کاؤنی گاؤں میں جنگجوؤں کی ایک زیر زمین جنگجو کی کمین گاہ جوکہ2کمروں اور ایک بیت الخلاءپر مشتمل تھی، کو تباہ کیا گیا اور وہاں سے ہتھیار وگولی بارود برآمد کیا گیا ۔ پولیس ترجمان نے اپنے ایک بیان میں کہا کہ لشکر طیبہ کے جنگجوؤں کی موجودگی کی اطلاع ملنے پر جمعہ کواونتی پورہ پولیس، 55آر آر اور185بٹالین سی آر پی ایف نے کاؤنی گاؤںمیں تلاشی کارروائی عمل میں لائی ۔ترجمان نے بتایا کہ گاؤں میں تلاشی کارروائی کے دوران گاؤں میں زیر زمین بنائی گئی جنگجو ؤں کی کمین گاہ کو تباہ کیا گیا ۔ پولیس نے بتایا کہ جنگجوؤں نے / جاری صفحہ نمبر ۱۱پر
چھپنے کے لئے گاؤں میں زیر زمین7*10فٹ اور7*7فٹ دو کمرے اور ایک 3*4فٹ بیت الخلاءبنایا تھا ۔انہوں نے کہا کہ کمروں اور بیت الخلاءکی اونچائی8فٹ تھی اور کمروں میں داخل ہونے کے لئے 2.5*2.5فٹ در وازہ بنایا گیا ،جس لوہے کے ڈھکن سے بند کیا گیا تھا ۔ پولیس ترجمان نے بتایا کہ لشکر طیبہ جنگجوؤں کی اس کمین گاہ سے ہتھیاروں کی بھاری کھیپ ضبط کی گئی ،جس میں ایک پستول ،2پستول میگزین ،اے کے47کی گولیاں ،4گرینیڈ شامل ہیں ۔پولیس نے معاملے کی نسبت اونتی پورہ پولیس تھانہ میں ایک ایف آئی آر 147/2020درج کرکے مزید تحقیقات شروع کردی ۔

مزید دیکهے

متعلقہ خبریں