لفٹینٹ گورنر نے عنقریب منعقد ہونے والے’’ میرا قصبہ میرا غرور ‘‘کیلئے تیاریوں کا جائیزہ لیا

شہری آبادی تک انتظامیہ کی رسائی اُن کی دہلیز پر فراہم کرنے پر زور دیا - میونسپل کمیٹیوں ، میونسپل کونسلوں اور میونسپل کارپوریشن کے حق میں بالترتیب 50 لاکھ ، ایک کروڑ اور 5 کروڑ فی کس کے حساب سے واگذار کئے جائیںگے

سرینگر /حکومت کے بیک ٹو ولیج پروگرام کے ایک کامیاب انعقاد کے بعد لفٹینٹ گورنر منوج سنہا نے  آج یہاں راج بھون میں میونسپل علاقوں کیلئے میرا قصبہ میرا غرور پروگرام کیلئے جاری تیاریوں کا جائیزہ لیا ۔ دو روزہ طویل پروگرام بلدیاتی اداروں میں 19 اور 20 اکتوبر کو منعقد کیا جا رہا ہے جس کے دوران عوامی خدمت فراہمی کیمپ قائم کئے جائیں گے ۔ لفٹینٹ گورنر نے دو روزہ پروگرام کے بنیادی مقصد یعنی بلدیاتی اداروں کو بااختیار بنا کر انہیں قصبوں میں رہنے والی شہری آبادی تک رسائی حاصل کر کے انتظامیہ کو اُن کی دہلیز پر ہی اُن کے مسائل اور شکایات کا ازالہ کرنے پر زور دیا ۔ انہوں نے افسروں کو ہدایات دیں کہ وہ اس پروگرام کو بلدیاتی لوکل سیلف گورننس کو مستحکم بناکر لوگوں کیلئے ایک فعال جوابدہ انتظامیہ فراہم رکھیں ۔ پروگرام کے تحت ترقیاتی سرگرمیوں کو فروغ دینے کیلئے ہر میونسپل کمیٹی ، میونسپل کونسل اور میونسپل کارپوریشن کے حق میں/ جاری صفحہ نمبر ۱۱پر
 بالترتیب 50 لاکھ روپے ، ایک کروڑ اور پانچ کروڑ روپے واگذار کئے جائیں گے جن کا منصفانہ استعمال عمل میں لا کر زمینی سطح پر واضح تبدیلیاں لائی جائیں گی ۔ لفٹینٹ گورنر نے کیمپ کے دوران مختلف اہم دستاویزات اور اسناد کی معین مدت کے اندر اجراء پر خصوصی توجہ دینے پر زور دیا اس کے ساتھ ہی سماجی تحفظ اور انفرادی بہبودی سکیموں کی صد فیصد عمل آوری یقینی بنانے کی بھی متعلقہ حکام کو ہدایت دی ۔ لفٹینٹ گورنر نے افسروں کو انتظامیہ کی کارکردگی میں خامیوں کی نشاندہی کر کے رکاوٹوں کو دور کرنے کیلئے کہا انہوں نے ڈپٹی کمشنروں اور دیگر اعلیٰ افسروں کو بلدیاتی جن ابھیان کیلئے فیلڈ اہلکاروں کی حوصلہ افزائی کرنے اور پروگرام کی کلہم نگرانی کرنے کی ہدایت دی ۔ انہوں نے کہا کہ میں موقعہ پر شکایات کا ازالہ اور عوامی خدمات کی فوری فراہمی پر توجہ مرکوز کر رہا ہوں ۔ اس موقعہ پر لفٹینٹ گورنر کے مشیران کے کے شرما ، فاروق خان ، آر آر بٹھناگر ، بصیر خان ، چیف سیکریٹری ، پرنسپل سیکرٹری داخلہ ، پرنسپل سیکرٹری مکانات و شہری ترقی ، لفٹینٹ گورنر کے پرنسپل سیکرٹری ، ڈویژنل کمشنران ، آئی جی ، ڈپٹی کمشنران ، ایس ایس پیز اور دیگر اعلیٰ افسران نے یا تو میٹنگ میں از خود شرکت کی یا بذریعہ ورچول طریقہ کار شرکت کی ۔

مزید دیکهے

متعلقہ خبریں