مہلوک اہلکاروں کے بچوں کو پرائیویٹ اسکولوں میں پڑھایا جائے گا: دلباغ سنگھ

جموں/ âیو این آئیá جموں و کشمیر پولیس سربراہ دلباغ سنگھ نے کہا ہے کہ مہلوک پولیس اہلکاروں کے بچوں کو پرائیویٹ اسکولوں میں پڑھانے کے فیصلے پر غور کیا جا رہا ہے۔انہوں نے یو این آئی کو بتایا: 'یہ فیصلہ لیا گیا ہے کہ جاں بحق ہونے والے پولیس اہلکاروں کے بچوں، جو جموں وکشمیر پولیس پبلک اسکولوں کے بجائے پرائیویٹ اسکولوں میں پڑھنا چاہتے ہیں، کا بارہویں جماعت تک کی پڑھائی کا خرچہ حکومت برداشت کرے گی'۔موصوف نے کہا کہ اس سلسلے میں حکمنامہ جاری کیا گیا ہے لیکن اس کو ابھی عملی جامہ نہیں پہنایا گیا ہے۔انہوں نے کہا کہ ہم ایک مربوط میکانزم کے انتظار میں ہیں اور اس فیصلے کو عمل میں لانے سے قبل مختلف طریقہ ہائے کار پر کام کر رہے ہیں۔مسٹر دلباغ سنگھ نے بتایا کہ محکمہ مہلوک پولیس اہلکاروں کے اہل خانہ کو وقتاً فوقتاً نوکریوں کے علاوہ ایکسگریشیا ریلیف بھی دیتا ہے۔بتادیں کہ جموں وکشمیر میں گذشتہ تین دہائیوں کے دوران زائد از 15 سو پولیس اہلکاروں نے، جن میں افسروں کی بھی اچھی تعداد شامل ہے، نے ملی ٹنسی کا مقابلہ کرتے ہوئے اپنی جانیں نچھاور کی ہیں۔

مزید دیکهے

متعلقہ خبریں