سال ہمارا نہیں لیکن اب عز ت و احترم کے لئے لڑنا ہوگا: دھونی

شارجہ، 24اکتوبر (یو این آئی) ممبئی انڈینس سے دس وکٹ کے شکست کے بعد چنئی سپر کنگس کے کپتان مہندر سنگھ دھونی نے مایوسی کے ساتھ کہا کہ یہ سال ہمارا نہیں ہے اور اب ہمیں یہ دیکھنے کی ضرورت ہے کہ چوک کہاں پر ہوئی ہے۔جمعہ کو میچ میں شکست سے مایوس دھونی نے کہا کہ اس سے (شکست سے) دکھ ہوتا ہے۔ آپ کویہ دیکھنے کی ضرورت ہے کہ غلطی کہاں ہورہی ہے۔ یہ سال ہمارا نہیں ہے۔ اس سال صرف ایک یادو میچ میں ہم نے اچھی بلے بازی اور گیند بازی کی ہے۔یہ اتنا معنی نہیں رکھتا کہ آپ دس وکٹ سے شکست کھارہے ہیں یا آٹھ وکٹ سے۔ شکست سے تمام کھلاڑی مایوس ہیں لیکن وہ اپنی طرف سے جیتنے کی پوری کوشش کررہے ہیں۔ چیزیں ہمیشہ ہمارے مطابق نہیں چلتیں۔انہوں نے کہا کہ امید ہے کہ اگلے تین میچوں میں ہم اچھی کارکردگی کرسکیں گے۔ مجھے لگتا ہے کہ ہماری بلے بازی صحیح نہیں رہی۔ امباتی رائیڈو زخمی ہوگئے اور باقی بلے باز اچھا نہیں کرسکے اور ہم صرف بلے بازی پر دباو بناتے رہے۔
 ہم جب بھی شروعات اچھی نہیں کرتے ہیں تو مڈل آرڈر کے لئے بھی مشکل کھڑی ہوجاتی ہے۔دھونی نے کہا کہ کرکٹ میں جب آپ مشکل دور سے گزر رہے ہوتے ہیں تو آپ کو اچھی چیزیں ہونے کے لئے تھوڑے بہت نصیب کے ساتھ کی ضرورت بھی ہوتی ہے۔ اس ٹورنامنٹ میں چیزیں ہمارے حق میں نہیں رہیں۔ ہم نے ٹاس نہیں جیتا اور جب ہم بلے بازی کرنے لگے تو میدان پربہت اوس گر گئی اس لئے کچھ بھی ہمارے مطابق نہیں ہوا۔ جب بھی آپ اچھی کارکردگی نہیں کرتے ہیں تو اس کے سو اسباب ہوتے ہیں۔ ایک اہم بات ہے جو آپ خود سے پوچھتے ہیں کہ کیا آپ اپنی مکمل صلاحیت سے کھیل رہے ہیں۔چنئی سپر کنگس کے کپتان نے کہاکہ جب آپ گیارہ کھلاڑیوں کے ساتھ کھیلتے ہیں تو آپ جائزہ لیتے ہیں کہ میدان پر انہوں نے کس وقت اچھی کارکردگی کی۔ مجھے لگتا ہے کہ اس برس ہم نے یہ نہیں کیا۔ جب آپ کی ٹیم کے تین یا چار بلے باز اچھی کارکردگی نہیں کرتے تو میچ جیتنا مشکل ہوجاتا ہے۔ آپ جب مایوس ہوتے ہیں تو بھی اپنے چہرے پر مسکان رکھتے ہیں تاکہ ایسا نہ لگے کہ آپ گھبرائے ہوئے ہیں۔ ہم نے ڈریسنگ روم کا ماحول ویسا ہی رکھا ہے اور امید ہے کہ ہم اگلے تین میچوں میں کم از کم عزت وا حترام کیلئے ہی صحیح حالت کو بدلیں گے۔انہوں نے کہاکہ ہمیں اگلے سال کے لئے ایک واضح پروگرام کی ضرورت ہے۔ نیلامی کے طریقہ، کھیل کے مقامات کے بارے میںو ضاحت کی ضرورت ہے تاکہ کھلاڑیوں کو کارکردگی کرنے اور اپنی صلاحیت دکھانے کا موقع مل سکے۔ ہمیں اگلے تین میچوں میں اچھا کرنا ہے اور اس کے ذریعہ اگلے برس کے لئے اچھی تیاری ہوگی۔ میں کپتان ہوں اور کپتان کی ذمہ داری سے بھاگ نہیں سکتا اس لئے میں تمام میچوں میں کھیلوں گا

مزید دیکهے

متعلقہ خبریں