سرمدحفیظ نے محکمہ سیاحت کے د ور روزہ روایتی فوڈ فیسٹول کا اِفتتاح کیا -  کہا پکوان ، دستکاری ، ثقافت جموںوکشمیر کی سیاحت کی بنیاد ہے

     سرینگر/ محکمہ سیاحت کی جانب سے روایتی فوڈ کرافٹ میلے کے دو روزہ اِنعقاد کا افتتاح ہوا جس میں قریباً 50خواتین نے شرکت کی۔اِس میلے کا اِفتتاح سیکرٹری سیاحت ، ثقافت اورامورِ نوجوان و کھیل کود سرمد حفیظ نے کیا۔اس موقعہ پراَپنے خیالات کا اِظہار کرتے ہوئے اُنہوں نے کہا کہ پکوان ، دستکاری جموں وکشمیر کی سیاحت کی اصل ہے جس کو محکمہ نے آنے والے تقاریب میں زیادہ سے زیادہ سے مشتہر کرنے کا فیصلہ کیاہے ۔انہوں نے کہا کہ محکمہ عنقریب ڈوگری اور کشمیری فوڈ میلوں کا بھی اِنعقاد کر کے غذائی سیاحت کے تصور کو فروغ دے گا۔اُنہوں نے کہا کہ محکمہ نے خواتین صنعت کاروں کے لئے ایک پلیٹ فارم فراہم کرنے کا فیصلہ لیا ہے ۔یہ روایتی فوڈ فیسٹول جے کے ڈی ٹی سی ، محکمہ ہینڈی کرافٹس ، اِنسٹی ٹیوٹ آف ہوٹل مینجمنٹ سری نگر اور ایک مقامی ایف ایم ریڈیو سٹیشن کے اشتراک سے منعقد کیا جارہا ہے۔ میلے کا مقصد مقامی روایتی پکوانوں کو مقبول عام بنانا ہے تاکہ سیاحوں کو مقامی ثقافت سے روشناس کرایا جاسکے اور تیزی سے غائب ہو رہی ضیافتوںکو زندہ رکھا جاسکے۔جن روایتی پکوانوں کا مقابلہ منعقد ہو رہا ہے ان میںاَلہ= ہچہ تہ= ماز، بمہ ژو¾نٹھ/ تہ= وانگن، ہَن:د تہ= ک.کر ، روانگن ہچہ تہ= ژامن ، ندر ،ہاک تہ= گاڑ= ،فرِتہ= ہاک ، ہ.گاڑ= ژ.ٹ اور زومرِٹھو¾ل تہ= گ.گجہ آر=شامل ہیں۔اِس سے قبل ناظم سیاحت کشمیر اور ایم ڈی جے کے ٹی ڈی نثار احمد وانی نے مقابلے کے اغراض و مقاصد بیان کئے۔آج روایتی پکوان کے مقابلے کا پہلا دورہوٹل منیجمنٹ راج باغ سری نگر میں منعقد ہواجس میں 50خواتین نے شرکت کی جن میں سے 16 حتمی دور کے مقابلے کے لئے ماہرین نے منتخب کیا جوکہ ایتوار کو منعقد ہو رہا ہے ۔
شام گئے کونگ پوش ریستوران راج باغ سری نگر میں ایک ثقافتی پروگرام منعقد کیا جارہا ہے ۔ مقابلے کے دوسرے اور حتمی دور آئی آئی ایچ ایم اور کونگ پوش ریستوران زیروبرج سری نگر میں دن کے11 بجے منعقد ہوگا جس کے بعد روایتی مقامی پکوان ، مقامی دستکاری اور ثقافت کی نمائش ہوگی اور فاتحین میں انعامات تقسیم کئے جائیں گے۔اس موقعہ پر جوائنٹ ڈائریکٹر سیاحت تبسم شفاعت کاملی ، محکمہ کے دیگر سینئر افسران ، پرنسپل آئی آئی ایچ ایم  سری نگر قاضی شبیر ، آئی آئی ایچ ایم کے ماہرین اور سیاحتی صنعت سے وابستہ افراد موجوود تھے۔

مزید دیکهے

متعلقہ خبریں