15/ اگست کو لالچوک میں جھارکھنڈ کے صحافیوں کی طرفسے ترنگا لہرانے کا اعلان

12 اگست 2017

سرینگر/ کے این ایس /لالچوک میں15اگست کے موقع پر ترنگا لہرانے کیلئے جھار کھنڈ فیڈرشین ورکنگ جرنلسٹس نے ’ترنگا سمان یاترا‘ کا اہتمام کیا جسے مبینہ طور پر دیہی ترقی کے مرکزی وزیرسی پی سنگھ نے ہری جھنڈی دکھائی ۔ دیہی ترقی کے مرکزی وزیر نے جمعہ کے روز ’ترنگا سمان یاترا ‘ جسے جھارکھنڈ فیڈریشن آف ورکنگ جرنلسٹس نے اہتمام کے ہے ، کو ہری جھنڈی دکھا کر روانہ کیا ۔ میڈیا رپورٹس کے مطابق اس یاترا کا مقصد تجارتی مرکز لالچوک میںو اقع تاریخی اہمیت کے حامل گھنٹہ گھر پر ترنگا لہرانا ہے اور اس یاترا کا نام ترنگا یاترا دیا گیا ہے ۔ یہ اپنی نوعیت کی پہلی یاترا ہوگی تاہم اس سے پہلے بھی اس طرح کی کئی یاترا نکالی گئی اور لالچوک میں جھنڈا لہرانے کی کوششیں کی گئی ۔1992 میں بی جے پی کے سینئر لیڈر مرلی منوہر جوشی نے موجودہ وزیر اعظم نریندر مودی /
کے ہمراہ لالچوک میں ترنگا لہرایا تھا اور اس کے بعد گھنٹہ گھر کے نزدیک 26 اور 15 اگست کے موقعے پر فورسز جھنڈا لہراتے تھے اور یہ ایک روایت بن گئی تھی ۔ تاہم کئی برس قبل ریاستی حکومت نے لالچوک میں ترنگا لہرانے پر پابندی عائد کر دی ۔ معلوم ہوا ہے کہ 15 اگست کو لالچوک سرینگر میں ترنگا لہرانے کے حوالے سے جھارکھنڈ فیڈریشن آف ورکنگ جرنلسٹس نے ’ترنگا سمان یاترا ‘ کا اہتمام کیا اور اس یاترا کو موجودہ دیہی ترقی کے وزیر سی پی سنگھ نے ہری جھنڈٰ دکھا دی ۔ معلوم ہوا ہے کہ بھارت کی یوم آزادی کے موقعے پر مذکورہ صحافی لالچوک میں جھنڈا لہرائیں گے ۔ تاہم اس کی اجازتریاستی حکومت دے گی یا نہیں دے گی اس کے بارے میں کچھ بھی کہنا قبل از وقت ہوگا تاہم میڈیا رپورٹس کے مطابق 13 اگست کو مذکورہ یاترا کو امر جوان جوتی ﴿انڈیا گیٹ ﴾ ۔ نئی دلی سے بھی ہی جھنڈی دکھائی جائیگی ۔ معلوم ہوا ہے کہ آر ایس ایس کے نظریہ سے اتفاق رکھنے والے اندریش کمار ، سائی فائونڈیشن کے صدر اور انڈین فیڈریشن آف ورکنگ جرنلسٹس کے وکرم رائو نے کہا کہ اس یاترا کو مرکزی وزیر داخلہ راجناتھ سنگھ 13 اگست کو ہری جھنڈی دکھائیں گے ۔

تبصرے