محبوبہ نے سرینگر میں اولین نیم خود کار کار پارکنگ سہولیت کا افتتاح کیا

17 مئ 2017 (05:54)

سرینگروزیر اعلیٰ محبوبہ مفتی نے کل یہاں مولانا آزاد روڈ پر پرانے کے ایم ڈی بس اڈے میں نیم خود کار کار پارکنگ سہولیت کا افتتاح کیا ۔ یہ سہولیت شہر سرینگر کے مصروف ترین لال چوک علاقے سے گذرنے والی گاڑیوں اور مسافروں کیلئے ایک بہت بڑی راحت ہو گی ۔ اس نوعیت کی جدید ٹیکنالوجی پر مبنی کار پارکنگ سہولیت ریاست میں پہلی بار قایم کی گئی ہے ۔ نائب وزیر اعلیٰ ڈاکٹر نرمل سنگھ ، وزیر تعلیم سید الطاف بخاری ، وزیر مملکت برائے مکانات و شہری ترقی آسیہ  نقاش ، قانون ساز نور محمد شیخ ، انجم فاضلی اور خورشید عالم اس موقعہ پر موجود تھے ۔ وزیر اعلیٰ نے بٹن دبا کر سہولیت کا افتتاح کیا ۔ انہوں نے پارکنگ سہولیت میں مختلف پارکنگ سطحوں کا جائیزہ لیا اور گاڑیوں کی پارکنگ اور انہیں وہاں سے نکالنے کا مشاہدہ کیا ۔ سی ای او ایرا نے وزیر اعلیٰ کو پروجیکٹ کے خدو خال کے بارے میں جانکاری دی ۔ وزیر اعلیٰ نے کہا کہ شہر میں گاڑیوں کی تعداد میں ہو رہے اضافے کے سبب اس نوعیت کی سہولیت کی ضرورت کا احساس کافی وقت سے تھا ۔ انہوں نے امید ظاہر کی کہ اس سہولیت کے قیام سے لال چوک اور گردو نواح میں ٹریفک کے دباؤ میں کمی آئے گی ۔ اس جدید کار پارکنگ سہولیت کا سارا میکنزم خود کار ہے جس میں فیس کی ادائیگی اور رسید حاصل کرنے کا عمل بھی شامل ہے ۔ زائد از 1545  مربع میٹر پر پھیلا ہوا شہر کے مصروف ترین تجارتی مرکز میں قایم یہ پارکنگ سہولیت 27.15 کروڑ روپے کی لاگت سے تعمیر کی گئی ہے اور اس میں 288 گاڑیوں کو پارک کرنے کی صلاحیت موجود ہے ۔ یہ سہولیت 4 بیز پر مشتمل ہے اور ہر ایک میں 72 گاڑیوں کو پارک کرنے کی گنجایش ہے اس کے علاوہ عمارت میں ایک کمرشل کمپلیکس ،دفتر اور بیت الخلائ بھی موجود ہے ۔ سہولیت کی تعمیر اکنامک ری کنسٹریکشن ایجنسی نے ایشین ڈیولپمنٹ بنک کی مالی معاونت سے کی ہے اور پروجیکٹ کی تکمیل دو برسوں میں مکمل کی گئی ۔ صوبائی کمشنر کشمیر ، انسپکٹر جنرل پولیس ٹریفک ، ڈپٹی کمشنر سرینگر ، وایس چئیر مین ایس ڈی اے دیگر اعلیٰ افسران ، معزز شہری ، تاجر طبقہ اس موقعہ پر موجود تھا ۔

تبصرے